پشتون قبائل

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
یہاں جائیں: رہنمائی، تلاش کریں

پشتون قبائل (پشتو:) پشتونوں کے مختلف قبائل کو کہا جاتا ہے، تاریخی طور پر پشتون زیادہ تر قبائل میں رہے ہیں،حال یہ کہ موجودہ دور میں بھی بہت سے مقامات پر قبائلی نظام رائج ہیں خاص کر پاکستان کے قبائلی علاقہ جات، وسطی اور مشرقی افغانستان میں۔ بنیادی طور پر تمام پشتون چار اہم قبائل میں تقسیم ہیں پھر انہیں قبائل میں مزید ذیلی قبائل بنے ہیں،وہ چار قبائل یہ ہیں:

  1. بٹانی
  2. سربنی
  3. غرغشت
  4. کرلانی

ان چار بنیادی قبائل کے متعلق پشتون روایات میں کہا جاتا ہے کہ یہ نام اس لیے پڑے کیونکہ پشتون اپنے آپ کو قیس عبدالرشید کی اولاد سمجھتے ہیں۔ قیس عبد الشید کے تین بیٹے تھے جن کی وجہ سے یہ نام پڑے، وہ چار بیٹے یہ ہیں:

  • سربن (سرابند)
  • بیٹ (بٹان/پٹان)
  • غرغشت
  • اورمڑ

اس وقت پشتونوں میں تقربیاََ 350 - 400 سے زیادہ قبائلی شاخیں موجود ہیں۔

قبائل اور ان کے ذیلی شاخیں[ترمیم]

بٹانی شاخ میں درج ذیل قبائل اور ذیلی قبائل ہیں:[1]

غرغشت شاخ میں درج ذیل قبائل اور ذیلی قبائل ہیں:

کرلانی شاخ میں درج ذیل قبائل اور ذیلی قبائل ہیں:

سرابند (سربنی) شاخ میں درج ذیل قبائل اور ذیلی قبائل ہیں:[2]

مزید[ترمیم]

حوالہ جات[ترمیم]

  1. Robinson, J. A. (1935) "Powindah Bhittani" Notes on Nomad Tribes of Eastern Afghanistan Government of India Press, New Delhi, India, page 158, OCLC 70239499
  2. "PashtunFoundation.org"۔ En.pashtunfoundation.org۔ اخذ کردہ بتاریخ 2012-06-20۔ 
  3. Khan، Roshan (1986)۔ Yūsufzaʼī qaum kī sarguzasht۔ Karachi: Roshan Khan and Company۔