پنجاب (بھارت) میں کورونا وائرس کی وبا، 2020ء

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search
کورونا وائرس کی عالمی وبا، 2019ء - 2020ء in پنجاب، بھارت
India Punjab COVID-19 map.png
پنجاب میں وبائی امراض کا نقشہ (مطابق ۲۲ مارچ 2020)
  10–29 تصدیق شدہ کیس
  1–9 تصدیق شدہ کیس
COVID-19 Death Cases in Punjab, India.png
پنجاب میں اموات کے واقعات کا نقشہ (مطابق ۲۲ مارچ 2020)
  1–9 اموات کیس
مرضکورونا وائرس کا مرض 2019ء
وائرس نوعسارس کووی 2
مقامپنجاب، بھارت
پہلا مریضامرتسر
تاریخ آمد9 مارچ 2020
(3 ماہ، 3 ہفتہ اور 4 دن)
آغازچین، اطالیہ
مصدقہ مریض1032[1]
زیر علاج مریض899
صحت یابیاں112
اموات
21
خطے
باضابطہ ویب سائٹ
cova.punjab.gov.in/cdashboard

پنجاب، بھارت میں کورونا وائرس کی وبا، 2019ء - 2020ء کا پہلا معاملہ 9 مارچ کو پیش آیا۔ 03 مئی 2020ء تک ریاست میں 1032 معاملے سامنے آچکے ہیں۔ وزارت صحت و خاندانی بہبود، حکومت ہند کے مطابق ریاست میں 21 موت بھی ہو چکی ہے جب کی 112 لوگ صحتیاب ہو چکے ہیں۔[2]

شماریات[ترمیم]

2020 coronavirus pandemic in Punjab by Districts
ضلع مصادقہ معاملات شفایاب اموات کل
امرتسر 2 0 0 2
ہوشیارپور 1 0 0 1
اجیت گڑھ 4 0 0 4
ضلع شہید بھگت سنگھ نگر 13 0 1 14
Total 20 0 1 21
2020 coronavirus pandemic in India by state and union territory
District Confirmed cases Recovered Death Total
امرتسر 2 0 0 2
ہوشیارپور 1 0 0 1
اجیت گڑھ 4 0 0 4
ضلع شہید بھگت سنگھ نگر 13 0 1 7
Total 20 0 1 21

خط زمانی[ترمیم]

  • 9 مارچ- امرتسر میں کورونا کا پہلا معاملہ سامنے آیا۔ مریض حال ہی میں اطالیہ سے واپس ہوا تھا۔[3]
  • 13 مارچ-ایک 72 سالہ شخص جرمنی سے اطالیہ ہوتے ہوئے پنجاب لوٹا اور مریض پایا گیا۔ وہ پنجاب میں پہلا متاثر شخص تھا اور بھارت میں چوتھا۔[4]
  • 20 مارچ- اجیت گڑھ مملکت متحدہ سے لوٹی ایک 68 سالہ خاتون مثبت پائی گئی۔ یہ پنجاب کا کا تیسرا معاملہ تھا۔[5]
  • 22 مارچ- ضلع شہید بھگت سنگھ نگر میں 7 نئے مریضوں کی تصدیق ہوئی۔ یہ ساتوں مریض ضلع میں کورونا سے متاثر ہو کر مرنے والے شخص کے رابطے میں آئے تھے۔[8]

رد عمل[ترمیم]

  • 13 مارچ- حکومت نے تمام اسکولوں اور کالجوں میں 31 مارچ تک چھٹی کا اعلان کردیا۔[9]
  • 19 مارچ- حکومت پنجاب نے تمام جم خانے، ریستوراں وغیرہ بند کرنے کا حکم نامہ جاری کیا۔[10]
  • 19 مارچ-پنجاب اسکول ایجوکیشن بورڈ نے 10ویں اور 12ویں کے بورڈ کے امتحانات کو موخر کردیا۔[11] حکومت پنجاب نے 20 سے زائد لوگوں کو ایک ساتھ جمع ہونے پر پابندی لگادی ہے۔[12]
  • 22 مارچ-حکومت پنجاب نے ایمجرجنسی خدمات کو چھوڑ کر 31 مارچ تک ریاست میں مکمل تالہ بندی کا اعلان کردیا۔[13]

مزید دیکھیے[ترمیم]

حوالہ جات[ترمیم]

  1. District wise list وزارت صحت و خاندانی بہبود، حکومت ہند (pdf)۔ Retrieved 22 مارچ 2020.
  2. "Home | Ministry of Health and Family Welfare | GOI". www.mohfw.gov.in. اخذ شدہ بتاریخ 21 مارچ 2020. 
  3. "Fresh coronavirus cases emerge from Punjab, Bengaluru; takes total to 45". Livemint (بزبان انگریزی). 9 مارچ 2020. اخذ شدہ بتاریخ 9 مارچ 2020. 
  4. "72-year-old Punjab man who passed away tests positive for coronavirus; he had returned from Italy". India Today. اخذ شدہ بتاریخ 19 مارچ 2020. 
  5. Coronavirus positive case in Mohali, Total 3 in Punjab India TV۔ Retrieved 20 مارچ 2020.
  6. Mohali get 3 more corona positive cases Times of India۔ Retrieved 21 مارچ 2020.
  7. Coronavirus cases in Punjab increses to 13 PTC NEWS۔ Retrieved 21 مارچ 2020.
  8. "Seven more test positive in Punjab". economictimes.indiatimes.com. اخذ شدہ بتاریخ 22 مارچ 2020. 
  9. "Punjab Schools, colleges and universities shut till 31 مارچ to prevent coronavirus spread". The Tribune. اخذ شدہ بتاریخ 14 مارچ 2020. 
  10. Coronavirus positive case in Mohali, Total 3 in Punjab India TV۔ Retrieved 20 مارچ 2020.
  11. "PSEB postponed Punjab board class 10 and 12 exams". NDTV. اخذ شدہ بتاریخ 21 مارچ 2020. 
  12. "Punjab shuts down public transport". NDTV. اخذ شدہ بتاریخ 21 مارچ 2020. 
  13. "Punjab announces complete lockdown till 31 مارچ". National Herald India. اخذ شدہ بتاریخ 22 مارچ 2020.