ضلع پٹنہ

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
(پٹنہ ضلع سے رجوع مکرر)
Jump to navigation Jump to search
پٹنہ ضلع
بہار کے اضلاع کی فہرست
Location of Patna district in Bihar
Location of Patna district in Bihar
ملک بھارت
بھارت کی ریاستیں اور یونین علاقے بہار (بھارت)
بھارت کی انتظامی تقسیم Patna division
Headquarters پٹنہ
حکومت
 • لوک سبھا 1. Patna Sahib، 2. Pataliputra، 3. Munger (shared with Munger district)
 • ودھان سبھا 14
رقبہ
 • Total 3,202 کلو میٹر2 (1,236 مربع میل)
آبادی (2011)
 • Total 5,838,465
 • کثافت 1,800/کلو میٹر2 (4,700/مربع میل)
 • شہری 2,514,590 (43.7 per cent) (2,011)
Demographics
 • بھارت میں شرح خواندگی 73.68 per cent[1]
 • Sex ratio 897
منطقۂ وقت بھارتی معیاری وقت (UTC+05:30)
بھارتی سڑکوں کا جال نیشنل ہائی وے 30 (بھارت)، NH 83
ویب سائٹ http://patna.bih.nic.in

بھارتی ریاست بہار کے 38 اضلاع میں سے ایک ضلع- پٹنہ ضلع کے ڈسٹرکٹ ہیڈکوارٹر کے طور پر پٹنہ بہار کے ساتھ ریاست کے تیس آٹھ اضلاع میں سے ایک ہے۔ پٹنہ ضلع پٹنہ ڈویژن کا ایک حصہ ہے۔

2011ء میں پٹنہ بہار کے تمام اضلاع[2] میں سب سے زیادہ آباد اور بھارت کے اضلاع میں 15واں اباد ترین ضلع ہے۔[3][4] پٹنہ کے ڈسکٹرکٹ مجیسٹریٹ کا دفتر پٹنہ سکریٹریٹ میں واقع ہے۔ پٹنہ ضلع کی کل آمدنی ڈکسٹرکٹ کلکٹر کی ذمہ داری میں آتی ہے۔

تاریخ[ترمیم]

پٹنہ دنیا کے قدیم ترین آباد شہروں میں سے ایک ہے۔[5] پٹنہ کاقیام 490 ق م مگدھ کے دور حکومت میں ہوا۔ قدیم پٹنہ کو پاٹلی پتر بھی کہتے ہیں اور یہ ہریک سلطنت، نند سلطنت، شونگ سلطنت، موریا سلطنت اور گپتا سلطنت میں مگدھ سلطنت کا دارالحکومت رہا ہے۔ اس زمانہ میں پاتلی پتر فنون لطیفہ کی تعلیم کا مرکز ہوا کرتا تھا۔ یہاں آریہ بھٹ، پانینی، وتسیہ یان، چانکیہ اور کالی داس جیسے عظیم ماہر فلکیات اور علما کا وطن رہ چکا ہے۔[6][7] موریا دور حکومت میں تقریباً 300 ق م میں پٹنہ کی کل آبادی تقریباً 400,000 تھی۔ موریا اور گپتا سلطنتوں میں پٹنہ سیاست، طاقت، حکومت اور تعلیم کا مرکز ہوا کرتا تھا۔ اب پٹنہ کی وہ شان و شوکت ماند پڑ چکی ہے۔ 17ویں صدی میں برطانوی حکومت نے یہاں بین الاقوامی تجارت شروع کی اور یوں یہ شہر کچھ کچھ چمک دمک رکھنے لگا ہے۔

جغرافیہ[ترمیم]

پٹنہ ضلع جزائر سلیمان 'مکیرہ جزائر پر نسبتا مساوی 3.202 مربع کلومیٹر (1،236 مربع میل) کے ایک علاقے پر قبضہ۔

ذیلی ڈویژن[ترمیم]

پٹنہ سدر، پٹنہ شہر، بڑھ، داناپور، مسوڑھی، پالیگنج۔

بلاکس: پٹنہ صدر، پھلواری شریف، سمپتچک، فتوہا، خسروپور، دانییاوان، بختیارپور، بڑھ، بیلچی، اتھملگولا، موکاما، پنڈرک، گھوسواری، بیہتا، مینر، داناپور، نوبتپور، مسوڑھی، دھنروا، پنپن۔

ذیلی تقسیم[ترمیم]

پٹنہ ضلع 6 ذیلی ڈویژن پر مشتمل ہے:

پٹنہ سدر پٹنہ شہر، بڑھ داناپور مسوڑھی، پالیگنج

معیشت[ترمیم]

2006 ء میں ملک کے 250 سب سے زیادہ پسماندہ اضلاع (باہر 640 کی کل) کے پٹنہ میں ایک نامزد کیا پنچایتی راج کی وزارت۔ حالیہ وقت پچھڑا علاقے فنڈنگ ​​ند پروگرام (BRGF) سے فنڈز وصول بہار میں 38 اضلاع میں سے ایک ہے۔

زرعی مصنوعات میں شامل ہیں: دان، مکئی، دالیں اور گندم۔ اس کے علاوہ تیل کے بیج۔ بویا علاقے کے تقریباً ایک تہائی چاول (دان) کے تحت ہے۔ اس طرح کی سبزیاں اور تربوز طور پر نقد فصلیں بھی ڈیارہ بیلٹ میں اضافہ کر رہے ہیں۔ بڑی صنعتوں چمڑے، ہستشلپ اور زراعت پرسنسکرن شامل ہیں۔ آبادی

2011 کی مردم شماری کے پٹنہ ضلع کے مطابق نکاراگوا کے قوم یا میری لینڈ امریکی ریاست پر تقریباً برابر 5.772.804 کی آبادی ہے۔ یہ بھارت میں 15th کی درجہ بندی (640 کی کل سے باہر) فراہم کرتا ہے۔ ضلع مربع کلومیٹر فی 1.803 باشندوں (4،670 / مربع میل) کی آبادی کثافت ہے۔ دہائی 2001–2011 کے دوران میں اس کی آبادی میں اضافہ کی شرح میں 22،34 فی صد تھی۔ پٹنہ ہر 1000 مردوں کے لیے 892 خواتین کا جنسی تناسب اور 72،47 فیصد شرح خواندگی ہے۔

آب و ہوا[ترمیم]

Climate[ترمیم]

آب ہوا معلومات برائے Patna
مہینا جنوری فروری مارچ اپریل مئی جون جولائی اگست ستمبر اکتوبر نومبر دسمبر سال
اوسط بلند °س (°ف) 23.3
(73.9)
26.5
(79.7)
32.6
(90.7)
37.7
(99.9)
38.9
(102)
36.7
(98.1)
33.0
(91.4)
32.4
(90.3)
32.3
(90.1)
31.5
(88.7)
28.8
(83.8)
24.7
(76.5)
31.53
(88.75)
اوسط کم °س (°ف) 9.2
(48.6)
11.6
(52.9)
16.4
(61.5)
22.3
(72.1)
25.2
(77.4)
26.7
(80.1)
26.2
(79.2)
26.1
(79)
25.7
(78.3)
21.8
(71.2)
14.7
(58.5)
9.9
(49.8)
19.65
(67.37)
اوسط عمل ترسیب مم (انچ) 19
(0.75)
11
(0.43)
11
(0.43)
8
(0.31)
33
(1.3)
134
(5.28)
306
(12.05)
274
(10.79)
227
(8.94)
94
(3.7)
9
(0.35)
4
(0.16)
1,130
(44.49)
ماخذ: worldweather.org[8]

جغرافیائی مقام[ترمیم]

حوالہ جات[ترمیم]

  1. "District-specific Literates and Literacy Rates, 2001"۔ Registrar General, India, Ministry of Home Affairs۔ مورخہ 14 اپریل 2010 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 5 اکتوبر 2010۔ Unknown parameter |url-status= ignored (معاونت)
  2. "District Census 2011"۔ Census2011.co.in۔ مورخہ 11 جون 2011 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 30 ستمبر 2011۔ Unknown parameter |url-status= ignored (معاونت)
  3. "Patna Pin Code list, Population density ،literacy rate and total Area with census 2011 details"۔ www.indiamapia.com۔ مورخہ 2017-10-17 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 2017-12-28۔ Unknown parameter |url-status= ignored (معاونت)
  4. "District wise population in India as of 2011 census"۔ updateOX (انگریزی زبان میں)۔ 2011-05-24۔ مورخہ 2017-12-29 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 2017-12-28۔ Unknown parameter |url-status= ignored (معاونت)
  5. "Populations of Largest Cities in PMNs from 2000BC to 1988AD"۔ مورخہ 29 ستمبر 2007 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔ Unknown parameter |url-status= ignored (معاونت)
  6. "Patna Tour"۔ cultureholidays.com۔ مورخہ 4 اپریل 2016 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 28 اگست 2016۔ Unknown parameter |url-status= ignored (معاونت)
  7. "Ancient Patliputra"۔ go4patna.com۔ مورخہ 18 اکتوبر 2016 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 28 اگست 2016۔ Unknown parameter |url-status= ignored (معاونت)
  8. "Climatological Information for Patna"۔ World Weather۔ مورخہ 8 اگست 2013 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 25 فروری 2011۔ Unknown parameter |url-status= ignored (معاونت)