چانکیہ

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search
چانکیہ
ایک مصور کی کھینچی ہوئی چانکیہ کی تصویر
ایک مصور کی کھینچی ہوئی چانکیہ کی تصویر
  -->
ایک مصور کی کھینچی ہوئی چانکیہ کی تصویر

معلومات شخصیت
پیدائشی نام (سنسکرت میں: kuatilya or vishnugupta خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں پیدائشی نام (P1477) ویکی ڈیٹا پر
تاریخ پیدائش سنہ 375 ق م  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں تاریخ پیدائش (P569) ویکی ڈیٹا پر
وفات سنہ 283 ق م  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں تاریخ وفات (P570) ویکی ڈیٹا پر
پٹنہ  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں مقام وفات (P20) ویکی ڈیٹا پر
شہریت Flag of India.svg بھارت  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں شہریت (P27) ویکی ڈیٹا پر
دیگر نام کوٹیلیہ، وشنو گپتا
عملی زندگی
مادر علمی ٹیکسلا
قابل ذکر طلبا چندر گپت موریا،بندو سار  خاصیت کی حیثیت میں تبدیلی کریں شاگرد (P802) ویکی ڈیٹا پر
پیشہ پروفیسر؛ مشیرِ چندرگپت موریا

چانکیہ : (اس آڈیو کے متعلق تلفظ ; c. 370 – c. 283 قبل مسیح)[2] چندر گپت موریا کا اتالیق اور وزیر اعظم تھا۔ اس کا اصلی نام وشنو گپت تھا۔ بڑا دانا تھا اس لیے عوام اور راجا اسے چانکیہ کے نام سے پکارتے تھے۔ اور نہایت ہی کُٹِل (حاسد) تھا اس لیے کوٹلیہ کے نام سے مشہور ہو گیا۔ بہت بڑا مدبر اور اعلی سیاست دان تصور کیا جاتا ہے۔ ذات کا برہمن تھا۔ اس کے دو نام اور بھی تھے۔ کوٹلیہ اور وشنو گپت۔ اس نے چندر گپت کی بہت مدد کی۔ اس کے مشورے سے چندر گپت نے پنجاب فتح کیا اور پھر مگدھ کے نند بادشاہ کو تخت سے اتار کر خود اس پر قبضہ جمایا۔ چانگیہ دھن کا پکا اور اول درجے کا ذہین زیرک اور سازشی ذہن رکھنے والا تھا۔ لیکن اس میں ایک بڑی خوبی یہ تھی کہ باوجود عیش و عشرت کے تمام سامان مہیا ہونے کے حددرجہ سادہ زندگی بسر کرتا تھا۔ شاہی محل کے نزدیک ایک جھونپڑی میں اس کی رہائش تھی۔ اس نے سیاست پر ایک کتاب ’’ارتھ شاستر‘‘ لکھی جس میں چندرگپت کے حالات کو بہت خوبی سے قلمبند کیا ہے۔

مزید دیکھیے[ترمیم]

حوالہ جات[ترمیم]

  1. V. K. Subramanian (1980). Maxims of Chanakya: Kautilya. Abhinav Publications. pp. 1–. ISBN 978-0-8364-0616-0. Retrieved 2012-06-06.
  2. S. K. Agarwal (1 September 2008)۔ Towards Improving Governance۔ Academic Foundation۔ صفحہ 17۔ آئی ایس بی این 978-81-7188-666-1۔ اخذ کردہ بتاریخ 2012-06-06۔ 

بیرونی روابط[ترمیم]