ڈننگ-کروگر ایفیکٹ

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search

ڈننگ-کروگر ایفیکٹ (انگریزی: Dunning–Kruger effect) کو ڈننگ اور کروگر نے 1999 میں پیش کیا۔یہ تھیوری ہمیں بتاتی ہے کہ "جس معاملے یا جس کام سے متعلق ہمارا علم جتنا کم اور ناقص ہوتا ہے، اس معاملے یا اس کام کے بارے میں ہم اتنا ہی زیادہ پر یقین اور پر اعتماد ہوتے ہیں" ۔


مزید دیکھیے[ترمیم]

حوالہ جات[ترمیم]