ڈنکن شارپ

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search
ڈنکن البرٹ شارپ ٹیسٹ کیپ نمبر 32
Dunkan sharp.jpeg
ذاتی معلومات
مکمل نامڈنکن البرٹ شارپ
پیدائش3 اگست 1937ء (عمر 85 سال)
راولپنڈی، پنجاب، پاکستان، برطانوی ہند
بلے بازیدائیں ہاتھ کا بلے باز
گیند بازیرائٹ آرم آف بریک بولر
حیثیتبلے باز
بین الاقوامی کرکٹ
قومی ٹیم
پہلا ٹیسٹ (کیپ 32)13 نومبر 1959  بمقابلہ  آسٹریلیا
آخری ٹیسٹ9 دسمبر 1959  بمقابلہ  آسٹریلیا
ملکی کرکٹ
عرصہٹیمیں
1957–58پنجاب کرکٹ ٹیم (پاکستان)
1958–59پاکستان ریلوے کرکٹ ٹیم
1959–61لاہور
1961–66جنوبی آسٹریلیا
کیریئر اعداد و شمار
مقابلہ ٹیسٹ فرسٹ کلاس
میچ 3 37
رنز بنائے 134 1,531
بیٹنگ اوسط 22.33 27.33
100s/50s –/1 2/7
ٹاپ اسکور 56 118
گیندیں کرائیں 154
وکٹ 1
بولنگ اوسط 100.00
اننگز میں 5 وکٹ
میچ میں 10 وکٹ
بہترین بولنگ 1/35
کیچ/سٹمپ 2/– 41/13
ماخذ: کرکٹ آرکیو، 28 جنوری 2009

ڈنکن البرٹ شارپ انگریزی:Duncan Albert Sharpe (پیدائش: 3 اگست 1937ء راولپنڈی، پنجاب) ایک پاکستانی کرکٹر ہے۔[1] جس نے پاکستان کی طرف سے 3 ٹیسٹ میچ کھیلے ڈنکن شارپ کا خاندان 19ویں صدی کے وسط سے برطانوی ہندوستان میں مقیم تھا کیونکہ ان کے آباؤ اجداد انگلینڈ سے ہجرت کر گئے تھے۔ وہ انگریز ناول نگار ولیم ٹھاکرے کے رشتہ دار تھے۔

ابتدائی زمانہ[ترمیم]

ڈنکن شارپ راولپنڈی میں پیدا ہوئے لیکن وہ لاہور میں پلے بڑھے جہاں ان کی والدہ ایک نرس تھیں۔ وہ تین بھائیوں میں سے ایک تھے جنہیں والدین کی علیحدگی کے بعد سینٹ انتھونی ہائی سکول، لاہور بورڈ میں بھیج دیا گیا تھا ڈنکن شارپ نے 17 سال کی عمر میں پاکستان ریلویز میں بطور کلرک ملازمت اختیار کی۔ڈنکن شارپ نے کبھی کبھار لاہور میں مقیم سول اینڈ ملٹری گزٹ کے لیے مضامین بھی لکھے۔

فرسٹ کلاس کرکٹ[ترمیم]

ڈنکن شارپ نے اپنا پہلا فرسٹ کلاس میچ ایک مڈل آرڈر بلے باز کے طور پر ریلوے اور بلوچستان کی طرف سے 1955-56 میں ملتان میں دورہ کرنے والی MCC ٹیم کے خلاف کھیلا۔ اپنے اگلے میچ میں، 1957-58ء قائد اعظم ٹرافی میں پنجاب اے کے لیے بہاولپور کے خلاف، اس نے وکٹ کیپ کی۔ اپنے ٹیسٹ کے علاوہ انہوں نے پاکستان میں اپنے زیادہ تر کیریئر کے دوران وکٹ کیپنگ کی۔ 1958-59ء میں جب ویسٹ انڈیز نے پاکستان کا دورہ کیا تو وہ دو ٹیسٹ میچوں کے لیے بارہویں کھلاڑی تھے، اور انہوں نے 1959ء میں نوجوان کھلاڑیوں کی ایک ٹیم پاکستان ایگلٹس کے ساتھ انگلینڈ کا دورہ کیا، جس نے تین ماہ کے غیر پہلے دورے پر 1608 رنز بنائے۔ کل نو فرسٹ کلاس میچوں اور 21.25 کی اوسط سے 255 رنز اور 67 کا ٹاپ سکور حاصل کیا۔اس نے اپنی پہلی فرسٹ کلاس سنچری بنائی، لاہور میں دورہ کرنے والی انڈین سٹارلیٹس کے خلاف کمبائنڈ الیون کے لیے 118 جبکہ 1960-61ء میں انہوں نے لاہور میں ایوب ٹرافی کے سیمی فائنل میں راولپنڈی اور پشاور کے خلاف لاہور کے لیے 109 رنز بنائے۔

ٹیسٹ کیرئیر[ترمیم]

ڈنکن شارپ نے 13 نومبر 1959ء کو ڈھاکہ میں آسٹریلیا کے خلاف پاکستان کے لیے ٹیسٹ ڈیبیو کیا۔ پانچویں نمبر پر بیٹنگ کرتے ہوئے، انہوں نے 56 اور 35 رنز بنائے۔ کم اسکور والے میچ میں اپنے کسی بھی ساتھی سے زیادہ رنز بنائے تاہم پاکستان یہ ٹیسٹ ہار گیا تھا۔ اس کے بعد والے دو ٹیسٹ میچز میں وہ کوئی قابل ذکر کارکردگی نہ دکھا سکے۔ لاہور کے دوسرے ٹیسٹ میں 12 اور 1 جبکہ کراچی کے تیسرے ٹیسٹ میں 4 اور 26 کی مایوس کن کارکردگی سب کے لیے حیرت کا باعث تھی-

پاکستان سے ہجرت[ترمیم]

پاکستان کے 1960-61ء کے ہندوستان کے دورے کے لیے اپنے منتخب نہ ہونے سے مایوس ہو کر آسٹریلیا ہجرت کرنے کا فیصلہ کیا۔وہ 1961ء میں ایڈیلیڈ چلے گئے اور انہ 1961-62ء سے 1965-66ء تک گیری سوبرز اور جرمین کی پسند کے ساتھ جنوبی آسٹریلیا کے ساتھ شیفیلڈ شیلڈ کرکٹ کھیلی۔ انہوں نے مغربی آسٹریلیا کے خلاف 1961-62ء میں سیزن کے پہلے شیفیلڈ شیلڈ میچ میں ناٹ آؤٹ 50 رنز بنائے لیکن اس کے بعد وہ کم کامیاب رہے اور بے قاعدگی سے کھیلے۔ جنوبی آسٹریلیا کے لیے ان کا سب سے زیادہ سکور 1965-66ء کے سیزن کے پہلے میچ میں وکٹوریہ کے خلاف 72 تھا، لیکن ان کا اگلا میچ بھی ان کا آخری تھا۔ اس کے پہلے کی طرح، دس سال پہلے، یہ دورہ کرنے والی ایم سی سی ٹیم کے خلاف تھا جس کے لیے کین بیرنگٹن اور جم پارکس دونوں میچ کھیل چکے تھے۔

اعداد و شمار[ترمیم]

ڈنکن شارپ نے 3 ٹیسٹ میچوں کی 6 اننگز میں 133 رنز بنائے جس میں 56 ان کا سب سے زیادہ سکور تھا۔ 22.23 کی اوسط سے بنائے گئے ان رنزوں میں ایک نصف سنچری بھی شامل تھی جبکہ 37 فرسٹ کلاس میچوں کی 60 اننگز میں چار دفعہ ناٹ آئوٹ رہ کر انہوں نے 1531 رنز بنائے۔ 118 ان کا بہترین سکور تھا۔ 27.33 کی اوسط سے بنائے گئے ان رنزوں میں 2سنچریاں اور 7 نصف سنچریاں بھی شامل تھیں[2]

آسٹریلیا میں رہائش[ترمیم]

ڈان بریڈمین کے توسط سے ان کو ایڈیلیڈ اوول میں گراؤنڈز مینز کی مدد کرنے کی نوکری مل گئی، اور اس نے اپنی صلاحیتوں اور قابلیت میں اضافہ کیا اور بعد میں میلبورن میں پارکوں اور باغات کے فورمین بن گئے۔ ڈنکن شارپ اپنی بیوی گیلین کے ساتھ میلبورن میں رہائش پذید ہے۔ ان کے 6 بچے ہیں۔ پاکستان میں پہلے کی شادی سے ان کا ایک بیٹا بھی ہے۔

مزید دیکھیے[ترمیم]

حوالہ جات[ترمیم]

  1. انگریزی ویکیپیڈیا کے مشارکین. "Duncan Sharpe". 
  2. https://www.espncricinfo.com/player/duncan-sharpe-42673