کرتارپور راہداری

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search
کرتارپور راہداری
Flag of Pakistan.svg Flag of India.png
مقام ضلع ناروال، کرتارپور، پنجاب، پاکستان
ضلع گرداسپور، پنجاب، بھارت
مالک حکومت پاکستان
ملک پاکستان، بھارت
کلیدی شخصیات عمران خان
قمر جاوید باجوہ
نوجوت سنگھ سدھو
قائم 28 نومبر 2018ء (2018ء-11-28)
حیثیت جزوی عملیاتی

کرتارپور راہداری بھارت اور پاکستان کے مابین مجوزہ سرحدی راہداری ہے جو بھارتی پنجاب میں واقع ڈیرہ بابا نانک صاحب کو پاکستان کے علاقہ کرتارپور میں واقع گردوارہ دربار صاحب کی مقدس عبادت گاہ سے منسلک کریگی۔ اس مجوزہ راہداری کا مقصد بھارت کے مذہبی عقیدت مندوں کو پاک بھارت سرحد سے محض 4.7 کلومیٹر دور واقع گردوارہ دربار صاحب کی زیارت کرنے میں آسانی پیدا کرنا ہے۔

پاکستان کے وزارت خارجہ کے ترجمان محمد فیصل کا کہنا تھا کہ اس راہداری کو نومبر 2019ء میں گرو نانک کے 550ویں یوم پیدائش سے پہلے حتمی شکل دی جائے گی۔[1]

بھارت کے وزیر اعظم نریندر مودی نے اس قدم کو دیوار برلن کے گرنے سے تشبیہ دیتے ہوئے کہا کہ اس منصوبے سے دونوں ممالک کے مابین پائی جانے والی کشیدگی کو کم کرنے میں مدد مل سکتی ہے۔[2]

پس منظر[ترمیم]

2000ء میں پاکستان نے بھارتی سکھ زائرین کو مقبرے کی زیارت کرنے کے لیے پاسپورٹ یا ویزہ کی پابندیاں ختم کرنے کا اعلان کیا تھا اس لیے میں سرحد کی بھارتی طرف ایک پل کی تعمیر کا عندیہ بھی دیا تھا۔[3][4][5]

اگست 2018ء میں پنجاب کے وزیر اور سابق ایم پی سدھو نے اعلان کیا کہ پاکستانی جنرل قمر جاوید باجوہ نے انہیں بتایا ہے کہ پاکستان کرتارپور کی راہداری کھول دے گا۔[6]

26 نومبر 2018ء کو بھارتی نائب صدر وینکائیا نائیڈو نے بھارتی پنجاب کے ضلع گورداسپور کے گاؤں منن میں ڈیرہ بابا نانک کرتارپور صاحب راہداری کی بنیاد رکھی۔[7]

28 نومبر 2018ء کو پاکستانی وزیر اعظم عمران خان نے پاکستانی پنجاب کے ضلع ناروال کے قریب کرتارپور گاؤں میں اس راہداری کی سنگ بنیاد رکھی۔[8] اس موقع پر دو بھارتی وزیر ہرسمرت کور بادل اور ہردیپ سنگھ پوری پاکستان میں موجود تھے۔ نوجوت سنگھ سدھو اور امرتسر ایم پی گرجیت سنگھ اوجلا بھی اس تقریب میں شامل ہوئے۔[9]

حوالہ جات[ترمیم]

  1. "Pakistan prime minister to lay foundation stone for Kartarpur corridor on Wednesday"۔ دی ٹائمز آف انڈیا۔ مورخہ 7 جنوری 2019 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 2018-11-28۔
  2. "Pakistan PM Imran Khan to lay foundation stone of Kartarpur corridor today"۔ ہندوستان ٹائمز (انگریزی زبان میں)۔ 2018-11-28۔ مورخہ 7 جنوری 2019 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 2018-11-28۔
  3. "Archived copy"۔ مورخہ 2011-01-01 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 2018-08-20۔ |archiveurl= اور |archive-url= ایک سے زائد مرتبہ درج ہے (معاونت); |archivedate= اور |archive-date= ایک سے زائد مرتبہ درج ہے (معاونت)
  4. "Pakistan ready for corridor"۔ دی ٹائمز آف انڈیا۔ اخذ شدہ بتاریخ 23 اگست 2018۔
  5. "KARTARPUR SAHIB – The Corridor to International Peace"۔ کرتارپور۔ مورخہ 7 جنوری 2019 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 23 اگست 2018۔
  6. "Navjot Singh Sidhu justifies hugging General Bajwa, says he felt love from Pakistan side"۔ دی ٹائمز آف انڈیا۔ مورخہ 7 جنوری 2019 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 23 اگست 2018۔
  7. "Vice President Of India Lays Foundation For Kartarpur Corridor" کرتارپور کوریڈور اخذ شدہ بتاریخ 26 نومبر 2018
  8. "Lays Foundation For Kartarpur Corridor" ہندوستان ٹائمز اخذ شدہ بتاریخ 28 نومبر 2018
  9. "Kartarpur Corridor Can Be Symbol Of Peace Between India, Pak: Residents"۔ این ڈی ٹی وی۔ مورخہ 7 جنوری 2019 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 2018-11-28۔