کرپٹو کرنسی

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search
کرپٹو کرنسیوں کے لوگو

کرپٹو کرنسی (انگریزی: Cryptocurrency) برقی وسیلۂ مبادلہ ہے جس میں کوئن کی ملکیت کو ایک برقی لیجر میں مضبوط کرپٹوگرافی کا استعمال کرتے ہوئے کمپیوٹر ڈیٹا بیس میں محفوظ کیا جاتا ہے تاکہ تمام اندراجوں کو محفوظ کیا جا سکے اور اضافی تطبیق شدہ لیجر اور کوئن کے تاریخچہ کو کنٹرول کیا جا سکے اور کوئن کے اس کے اصلی مالک کی جانب منتقلی کی تصدیق کی جا سکے۔[1][2] کرپٹو کرنسی کاغذی کرنسی کی طرح ظاہر میں موجود نہیں ہوتا ہے اور نا ہی کوئی مرکزی بینک اسے جاری کرتا ہے۔ کچھ کرپٹو کرنسیاں مرکزی ڈیجیٹل کرنسی اور مرکزی بینک کے برخلاف غیر مرکزی نظام کا استعمال کرتے ہیں۔[3] اگر کسی کرپٹو کرنسی کو جاری کرنے سے قبل تخلیق کرلیا جائے تو اسے مرکزی مان لیا جاتا ہے۔[4] کرپٹو کررنسی کو غیر مرکزی نظام کے ذریعے جب نافذ کیا جاتا ہے تو ہر کرپٹو کرنسی تقسیم شدہ لیجر ٹیکنالوجی کے تحت کام کرتا ہے۔ اس نطام کو بلاک چین کہا جاتا ہے جو عوامی مالیاتی لین دین ڈیٹا بیس کی طرح ہے۔[5]

بٹ کوئن کو 2009ء میں پہلی دفعہ اوپن سورس سافٹ ویئر کے طور پر جاری کیا گیا تھا اور وہ پہلا غیر مرکزی کرپٹو کرنسی تھا۔[6] اس کے بعد سے اب تک 6,000 متبادل کوئن تخلیق کئے جا چکے ہیں۔

حوالہ جات[ترمیم]

  1. Andy Greenberg (20 اپریل 2011). "Crypto Currency". Forbes. 31 اگست 2014 میں اصل سے آرکائیو شدہ. اخذ شدہ بتاریخ 8 اگست 2014. 
  2. Polansek، Tom (2 مئی 2016). "CME, ICE prepare pricing data that could boost bitcoin". روئٹرز. اخذ شدہ بتاریخ 3 مئی 2016. 
  3. Allison، Ian (8 ستمبر 2015). "If Banks Want Benefits of Blockchains, They Must Go Permissionless". International Business Times. 12 ستمبر 2015 میں اصل سے آرکائیو شدہ. اخذ شدہ بتاریخ 15 ستمبر 2015. 
  4. "Centralized Cryptocurrency Exchanges, Explained". COINTELEGRAPH. 10 مارچ 2018. اخذ شدہ بتاریخ 28 اپریل 2020. 
  5. Matteo D'Agnolo. "All you need to know about Bitcoin". timesofindia-economictimes. 26 اکتوبر 2015 میں اصل سے آرکائیو شدہ. 
  6. Sagona-Stophel، Katherine. "Bitcoin 101 white paper" (PDF). 13 اگست 2016 میں اصل (PDF) سے آرکائیو شدہ. اخذ شدہ بتاریخ 11 جولائی 2016. 

سانچہ:Cryptography navbox