کھوٹے سکے

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search
کھوٹے سکے
(Khotay Sikkay)
250px
ہدایت کارالطاف حسین
پروڈیوسررانا جاوید اقبال
نیامت علی
تحریربشیر نیاز
ستارے
راویمحمد عارف
موسیقیوجاہت عطرے
سنیماگرافیپرویز خان (سی اے پی)
ایڈیٹرقیصر ضمیر
پروڈکشن
کمپنی
تقسیم کاراپالو ویڈیو (انٹرنیشنل )
تاریخ نمائش
دورانیہ
168 دقیقہ
ملکFlag of Pakistan.svg پاکستان
زبانپنجابی۔اردو

کھوٹے سکے (انگریزی: Khotay Sikkay) ‏ پنجابی زبان میں فلم کا آغاز کیا۔ اس فلم كو 25 اگست، 1995ء كو پاکستان میں ریلیز ہوئى۔ پاکستانی اس فلم کا کریکٹر ایکشن، رومانوی فلموں کے بارے میں فلم کی تکمیل کی گی ہیں۔ اس فلم کے ڈائریکٹر الطاف حسین تھے۔ پروڈیوسر رانا جاوید اقبال تھے۔ کہانی بشیر نیاز نے لکھی تھی۔ اس فلم پر اداکاری کے منفرد کردار میں سلطان راہی، عمر شریف، فیصل منورظریف، عارف لوہار، شفقت چیمہ اور ہمایوں قریشی شامل ہیں۔ فلم کی موسیقی وجاہت عطرے نے ترتیب دی، فلم کے نغمات خواجہ پرویز اور سلیم احمد سلیم نے گیت لکھے۔ فلم کی لسٹ ریکارڈنگ میں شامل ادریس بھٹی انہوں نے گیتوں کی بہترین ریکارڈنگ کی اور نورجہاں، سائرہ نسیم، عارف لوہار اور انور رفیع نے گیت گائے۔

خلاصہ[ترمیم]

کچھ لوگ پیدائشی بڑے ہوتے ہیں۔ کچھ دن رات ایک کر کے بڑے بنتے ہیں۔ اور کچھ پر ٹرائی ٹھونسی جاتی ہے۔ وہ دونوں لاابالی لاپرواہ نکمے ناکارہ تھے کوئی انہیں نہیں پوچھتا تھا۔ تین ہو یا ڈیڑھ ہویا پون ہو۔ انکی زندگی ایک شکوہ اور شب وروز شکایت تھے۔ انکی حرکتوں سے عاجز باپ نے انہیں کھوٹے سکے کا خطاب دیکر گھر سے نکال دیا تھا۔ وہ کھوٹے کے کھوٹے رہے یا کھرے ہوگۓ اس سوال کا جواب فلم کھوٹے سکے ہے۔۔۔ بشیر نیاز۔۔۔ ویکیپیڈیا ترمیم ماخذ عاشق علی حجرہ شاہ مقیم۔

کاسٹ[ترمیم]

حوالہ جات[ترمیم]