گردوارہ پنجہ صاحب

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
یہاں جائیں: رہنمائی، تلاش کریں

سکھوں کا مشہور گردوارہ جو حسن ابدال ضلع اٹک کے مقام پر واقع ہے۔ وہاں ایک پتھر پر گرونانک جی کا پنجہ لگا ہوا ہے۔ یہ پتھر قصبے کے اندر ایک مکان میں محفوظ ہے، جو بالعموم مقفل رہتا ہے اور سکھ زائرین یا دوسرے زائرین کی آمد پر کھولا جاتا ہے۔ اسے 1823ء میں سردار ہری سنگھ نے تعمیر کرایا تھا۔ 1920ء تک یہ ہندو مہنتوں کے قبضے میں رہا۔ سکھوں کی مزاحمت کے بعد دوسرے گردواروں کے ساتھ یہ بھی سکھ پنتھ کے زیرانتظام آگیا۔ 1933ء میں اس عمارت کی تجدید کی گئی۔

{{Navbox long | name = اٹک | state = expanded | title = ضلع اٹک کے موضوعات | above = وجہ تسمیہ  · گھیبی لہجہ  · انسانی تہذیب کا اولین گہوارہ | below = | bodyclass = hlist | titlestyle = background:#8090EE; | image =


| style = background:#E9967A;

|group1= تحصیلیں | list1 = اٹک · پنڈی گھیپ · جنڈ · حسن ابدال · حضرو · فتح جنگ ·

| style = background:#C0EFEE; |group2=شہر | list2 = اٹک  · حضرو  · حسن ابدال  · جنڈ، اٹک  · فتح جنگ  · پنڈی گھیب  · [[توت ]ٌْٗٗ ملہووالی(احمدآباد)

| group3 = قصبہ جات | list3 = پنڈسلطانی · جلالیہ · چھب · چھچھ · حاجی شاہ · نانگاوالی · ہدووالی ·

| group4 = اہم مقامات | list4 = اٹک پل · سلسلہ کوہ کالا چٹا · قلعہ اٹک · گردوارہ پنجہ صاحب  · دریائے سندھ

}}