گرمائی اولمپکس میں ہاکی

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search
گرمائی اولمپکس میں ہاکی
Field hockey pictogram.svg
گورنر باڈی ایف آئی ایچ
مواقع 2 (مرد: 1; خواتین: 1)
کھیل
  • 1896
  • 1900
  • 1904
  • 1908
  • 1912
  • 1920
  • 1924
  • 1928
  • 1932
  • 1936
  • 1948
  • 1952
  • 1956
  • 1960
  • 1964
  • 1968
  • 1972
  • 1976
  • 1980
  • 1984
  • 1988
  • 1992
  • 1996
  • 2000
  • 2004
  • 2008
  • 2012
  • 2016

مرد[ترمیم]

خلاصہ جات[ترمیم]

سال میزبان فائنل تیسرے درجہ کے لیے مقابلہ
طلائی تمغا اسکور چاندی تمغا کانسی تمغا اسکور چوتھے پر
1908
Details
لندن
برطانیہ

(انگلستان مردوں کی قومی ہاکی ٹیم)
8–1
برطانیہ
(Ireland)

برطانیہ
(Scotland)

برطانیہ
(Wales)
[1]
1912 اسٹاک ہوم No hockey tournament No hockey tournament
1920
Details
انتورب
برطانیہ
[2]
ڈنمارک

بلجئیم
[2]
فرانس
1924 پیرس No hockey tournament No hockey tournament
1928
Details
ایمسٹرڈیم
بھارت
3–0
نیدرلینڈز

جرمنی
3–0
بلجئیم
1932
Details
لاس اینجلس
بھارت
[3]
جاپان

ریاستہائے متحدہ
[3]
1936
Details
برلن
بھارت
8–1
جرمنی

نیدرلینڈز
4–3
فرانس
1948
Details
لندن
بھارت
4–0
برطانیہ

نیدرلینڈز
1–1
4–1
(Replay)

پاکستان
1952
Details
ہلسنکی
بھارت
6–1
نیدرلینڈز

برطانیہ
2–1
پاکستان
1956
Details
ملبورن
بھارت
1–0
پاکستان

United Team of Germany[4]
3–1
برطانیہ
1960
Details
روم
پاکستان
1–0
بھارت

ہسپانیہ
2–1
برطانیہ
1964
Details
توکیو
بھارت
1–0
پاکستان

آسٹریلیا
3–2
اضافی وقت (کھیل)

ہسپانیہ
1968
Details
میکسیکو شہر
پاکستان
2–1
آسٹریلیا

بھارت
2–1
مغربی جرمنی
1972
Details
میونخ
مغربی جرمنی
1–0
پاکستان

بھارت
2–1
نیدرلینڈز
1976
Details
مانٹریال
نیوزی لینڈ
1–0
آسٹریلیا

پاکستان
3–2
نیدرلینڈز
1980
Details
ماسکو
بھارت
4–3
ہسپانیہ

سوویت اتحاد
2–1
پولینڈ
1984
Details
لاس اینجلس
پاکستان
2–1
اضافی وقت (کھیل)

مغربی جرمنی

برطانیہ
3–2
آسٹریلیا
1988
Details
سؤل
برطانیہ
3–1
مغربی جرمنی

نیدرلینڈز
2–1
آسٹریلیا
1992
Details
برشلونہ
جرمنی
2–1
آسٹریلیا

پاکستان
4–3
نیدرلینڈز
1996
Details
اٹلانٹا
نیدرلینڈز
3–1
ہسپانیہ

آسٹریلیا
3–2
جرمنی
2000
Details
سڈنی
نیدرلینڈز
3–3
(5–4)
Penalty strokes

جنوبی کوریا

آسٹریلیا
6–3
پاکستان
2004
Details
ایتھنز
آسٹریلیا
2–1
اضافی وقت (کھیل)

نیدرلینڈز

جرمنی
4–3
اضافی وقت (کھیل)

ہسپانیہ
2008
Details
بیجنگ
جرمنی
1–0
ہسپانیہ

آسٹریلیا
6–2
نیدرلینڈز
2012
Details
لندن
جرمنی
2–1
نیدرلینڈز

آسٹریلیا
3–1
برطانیہ
2016
Details
ریو دے جینیرو
ارجنٹائن
4–2
بلجئیم

جرمنی
1–1
(4–3)
Penalty shootout

نیدرلینڈز
2020
Details
توکیو

ٹیم کی صورت[ترمیم]

ٹیم 1908 1920 1928 1932 1936 1948 1952 1956 1960 1964 1968 1972 1976 1980 1984 1988 1992 1996 2000 2004 2008 2012 2016 2020 کل
 افغانستان چھٹی آٹھویں گیارہویں 3
 ارجنٹائن پانچویں 1چوتھی 1چوتھی گیارہویں آٹھویں گیارہویں نویں آٹھویں گیارہویں دسویں Q 10
 آسٹریلیا پانچویں چھٹی تیسری دوسری پانچویں دوسری چوتھی چوتھی دوسری تیسری تیسری فاتح تیسری تیسری 14
 آسٹریا نویں آٹھویں ساتویں 3
 بلجئیم تیسری چوتھی نویں پانچویں نویں ساتویں گیارہویں گیارہویں نویں دسویں نویں نویں پانچویں 13
 کینیڈا تیرہویں دسویں بارہویں گیارہویں دسویں دسویں 6
 چین گیارہویں 1
 CIS# دسویں 1
 کیوبا پانچویں 1
 ڈنمارک دوسری پانچویں دسویں گیارہویں 1چھٹی 5
 مشرقی جرمنی گیارہویں 1
 مصر بارہویں بارہویں 2
 انگلستان فاتح 1
 فن لینڈ نویں 1
 فرانس چھٹی چوتھی پانچویں چوتھی آٹھویں گیارہویں دسویں دسویں بارہویں 9
 برطانیہ فاتح دوسری تیسری چوتھی چوتھی نویں بارہویں چھٹی تیسری فاتح چھٹی ساتویں چھٹی نویں پانچویں چوتھی 16
 جرمنی پانچویں تیسری دوسری پانچویں فاتح چوتھی پانچویں تیسری فاتح فاتح Q 10
 ہانگ کانگ 1پانچویں 1
 مجارستان آٹھویں 1
 بھارت فاتح فاتح فاتح فاتح فاتح فاتح دوسری فاتح تیسری تیسری ساتویں فاتح پانچویں چھٹی ساتویں آٹھویں ساتویں ساتویں بارہویں Q 20
 آئرلینڈ دوسری 1
 اطالیہ گیارہویں تیرہویں 2
ٹیم 1908 1920 1928 1932 1936 1948 1952 1956 1960 1964 1968 1972 1976 1980 1984 1988 1992 1996 2000 2004 2008 2012 2016 2020 کل
 جاپان دوسری ساتویں 1چوتھی ساتویں بارہویں Q 6
 کینیا دسویں ساتویں چھٹی آٹھویں تیرہویں نویں بارہویں 7
 ملائیشیا نویں نویں 1پانچویں آٹھویں آٹھویں دسویں نویں گیارہویں گیارہویں 9
 میکسیکو 1چھٹی 1چھٹی 2
 نیدرلینڈز دوسری تیسری تیسری دوسری نویں ساتویں پانچویں چوتھی چوتھی چھٹی تیسری چوتھی فاتح فاتح دوسری چوتھی دوسری Q 17
 نیوزی لینڈ چھٹی پانچویں تیرہویں ساتویں نویں فاتح ساتویں آٹھویں چھٹی ساتویں نویں 11
 پاکستان چوتھی چوتھی دوسری فاتح دوسری فاتح دوسری تیسری فاتح پانچویں تیسری چھٹی چوتھی پانچویں آٹھویں ساتویں 16
 پولینڈ چھٹی بارہویں گیارہویں چوتھی بارہویں 5
 سکاٹ لینڈ تیسری 1
 سنگاپور آٹھویں 1
 جنوبی افریقا دسویں دسویں بارہویں گیارہویں 4
 جنوبی کوریا دسویں پانچویں دوسری آٹھویں چھٹی آٹھویں 6
 سوویت اتحاد# تیسری ساتویں 2
 ہسپانیہ ساتویں گیارہویں تیسری چوتھی چھٹی ساتویں چھٹی دوسری آٹھویں نویں پانچویں دوسری نویں چوتھی دوسری چھٹی 16
 سویٹزرلینڈ ساتویں پانچویں پانچویں ساتویں 1پانچویں 5
 تنزانیہ چھٹی 1
 یوگنڈا 1پانچویں 1
 Unified Team of Germany تیسری ساتویں پانچویں 3
 ریاستہائے متحدہ تیسری گیارہویں گیارہویں بارہویں گیارہویں بارہویں 6
 ویلز تیسری 1
 مغربی جرمنی چوتھی فاتح پانچویں دوسری دوسری 5
 زمبابوے گیارہویں 1
کل 6 4 9 3 11 13 12 12 16 15 16 16 11 6 12 12 12 12 12 12 12 12 12 12 270
# = states or teams that have since split into two or more independent nations

44 teams have competed in at least one Olympic Game.

خواتین[ترمیم]

خلاصہ جات[ترمیم]

سال میزبان فائنل تیسرے درجہ کے لیے مقابلہ
طلائی تمغا اسکور چاندی تمغا کانسی تمغا اسکور چوتھے پر
1980
تفصیلات
ماسکو
زمبابوے
[5]
چیکوسلوواکیہ

سوویت اتحاد
[6]
بھارت
1984
تفصیلات
لاس اینجلس
نیدرلینڈز
[7]
مغربی جرمنی

ریاستہائے متحدہ
(10–5)
Penalty strokes[8]

آسٹریلیا
1988
تفصیلات
سیول
آسٹریلیا
2–0
جنوبی کوریا

نیدرلینڈز
3–1
برطانیہ
1992
تفصیلات
برشلونہ
ہسپانیہ
2–1
after extra time

جرمنی

برطانیہ
4–3
جنوبی کوریا
1996
تفصیلات
اٹلانٹا، جارجیا
آسٹریلیا
3–1
جنوبی کوریا

نیدرلینڈز
0–0
(4–3)
Penalty strokes

برطانیہ
2000
تفصیلات
سڈنی
آسٹریلیا
3–1
ارجنٹائن

نیدرلینڈز
2–0
ہسپانیہ
2004
تفصیلات
ایتھنز
جرمنی
2–1
نیدرلینڈز

ارجنٹائن
1–0
چین
2008
تفصیلات
بیجنگ
نیدرلینڈز
2–0
چین

ارجنٹائن
3–1
جرمنی
2012
تفصیلات
لندن
نیدرلینڈز
2–0
ارجنٹائن

برطانیہ
3–1
نیوزی لینڈ
2016
تفصیلات
ریو دے جینیرو
2020
تفصیلات
توکیو

ٹیم کی صورت[ترمیم]

ٹیم 1980 1984 1988 1992 1996 2000 2004 2008 2012 2016 2020 Total
 ارجنٹائن ساتویں ساتویں دوسری تیسری تیسری دوسری 6
 آسٹریلیا چوتھی فاتح پانچویں فاتح فاتح پانچویں پانچویں پانچویں 8
 آسٹریا پانچویں 1
 بلجئیم گیارہویں 1
 کینیڈا پانچویں چھٹی ساتویں 3
 چیکوسلوواکیہ# دوسری 1
 چین پانچویں چوتھی دوسری چھٹی Q 4
 جرمنی دوسری چھٹی ساتویں فاتح چوتھی ساتویں Q 6
 برطانیہ چوتھی تیسری چوتھی آٹھویں چھٹی تیسری Q 6
 بھارت چوتھی 1
 جاپان آٹھویں دسویں نویں Q 3
 نیدرلینڈز فاتح تیسری چھٹی تیسری تیسری دوسری فاتح فاتح 8
 نیوزی لینڈ چھٹی آٹھویں چھٹی چھٹی بارہویں چوتھی 6
 پولینڈ چھٹی 1
 جنوبی افریقا دسویں نویں گیارہویں دسویں 4
 جنوبی کوریا دوسری چوتھی دوسری نویں ساتویں نویں آٹھویں Q 8
 سوویت اتحاد# تیسری 1
 ہسپانیہ فاتح آٹھویں چوتھی دسویں ساتویں 5
 ریاستہائے متحدہ تیسری آٹھویں پانچویں آٹھویں بارہویں 5
 مغربی جرمنی دوسری پانچویں 2
 زمبابوے فاتح 1
کل 6 6 8 8 8 10 10 12 12 12 12 104
# = states that have since split into two or more independent nations

Australia and the Netherlands are the only teams to have competed at almost every Olympic Games, except for only one edition; 21 teams have competed in at least one Olympic Games.

تمغا جات[ترمیم]

بھارتی ہاکی ٹیم 1936ء میں برلن میں
درجہ ملک طلائی چاندی کانسی کل
1  بھارت (IND)* 8 1 2 11
2  نیدرلینڈز (NED) 5 5 6 16
3  آسٹریلیا (AUS) 4 3 5 12
4  جرمنی (GER) 4 2 2 8
5  پاکستان (PAK) 3 3 2 8
6  برطانیہ عظمیٰ (GBR) 3 2 6 11
7  ہسپانیہ (ESP) 1 3 1 5
8  مغربی جرمنی (FRG) 1 3 0 4
9  نیوزی لینڈ (NZL) 1 0 0 1
 زمبابوے (ZIM) 1 0 0 1
11  جنوبی کوریا (KOR) 0 3 0 3
12  ارجنٹائن (ARG) 0 2 2 4
13  چین (CHN) 0 1 0 1
 چیکوسلوواکیہ (TCH) 0 1 0 1
 ڈنمارک (DEN) 0 1 0 1
 جاپان (JPN) 0 1 0 1
17  سوویت یونین (URS) 0 0 2 2
 ریاستہائے متحدہ (USA) 0 0 2 2
19  بیلجئیم (BEL) 0 0 1 1
 متحدہ جرمنی کی ٹیم (EUA) 0 0 1 1
کل 31 31 32 94

* 3 طلائی تمغے برطانوی بھارت کے طور پر بھی شامل ہیں

ممالک[ترمیم]

Only players who participated in at least one game are counted.

ملک 96 00 04 08 12 20 24 28 32 36 48 52 56 60 64 68 72 76 80 84 88 92 96 00 04 08 12 سال
 افغانستان (AFG)           12 14 X 3
 ارجنٹائن (ARG)           12 X X X X X X X X X 10
 آسٹریلیا (AUS)           X X X X X X X X X X X X X X 14
 آسٹریا (AUT)           16 12 11 3
 بیلجئیم (BEL)         14   18 12 13 11 X X X X X X X X 13
 کینیڈا (CAN)           X X X X X X 6
 چین (CHN)           X X 1
 کیوبا (CUB)           X 1
 ڈنمارک (DEN)         12   13 13 16 X 5
 مصر (EGY)           X X 2
 فن لینڈ (FIN)           11 1
 فرانس (FRA)       11   11   15 18 14 13 X X X 9
 جرمنی (GER)       11     19 22 15 X X X X X X X X X X 14
 مشرقی جرمنی (GDR)           X 1
 مغربی جرمنی (FRG)           X X X X 4
 برطانیہ عظمیٰ (GBR)       44*   15   12 13 X X X X X X X X X X X X X 17
 ہانگ کانگ (HKG)           X 1
 مجارستان (HUN)           15 1
 بھارت (IND)           14 15 19 20 14 X X X X X X X X X X X X X X 19
 اطالیہ (ITA)           11 X 2
 جاپان (JPN)           11 11 X X X X 6
 جنوبی کوریا (KOR)           X X X X X X 6
 کینیا (KEN)           X X X X X X X 7
 ملیشیا (MAS)           X X X X X X X X X 9
 میکسیکو (MEX)           X X 2
 نیدرلینڈز (NED)           11 12 12 11 X X X X X X X X X X X X X 14
 نیوزی لینڈ (NZL)           X X X X X X X X X X X 11
 پاکستان (PAK)           19 16 X X X X X X X X X X X X X 15
 پولینڈ (POL)           11 X X X X 5
 روڈیسیا (RHO)           X 1
 ہسپانیہ (ESP)           15 14 X X X X X X X X X X X X X X 16
 سنگاپور (SIN)           X 1
 سوویت یونین (URS)           X X 2
 جنوبی افریقا (RSA)           X X X X 4
 سويزر لينڈ (SUI)           16 13 15 11 X 5
 تنزانیہ (TAN)           X 1
 متحدہ ٹیم (EUN)           X 1
 یوگنڈا (UGA)           X 4
 ریاستہائے متحدہ (USA)           13 14 14 X X X X 7
 روڈیسیا (RHO)           X 1
ممالک 3 4 9 3 11 13 12
ہاکی کھلاڑی 66 52 137 39 161 187 144

* Four teams competed: England, Ireland, Scotland, and Wales.

مزید دیکھیے[ترمیم]

حوالہ جات[ترمیم]

  1. There was no bronze medal match for the 1908 Games in London.
  2. ^ ا ب The 1920 tournament was played in a راؤنڈ روبن ٹورنامنٹ format, so there were no gold medal or bronze medal matches.
  3. ^ ا ب Only three teams participated in the 1932 tournament, so they played a round-robin format.
  4. The United Team of Germany was the combined team from مغربی جرمنی and مشرقی جرمنی that competed together at the Olympic Games from 1956 to 1964. Then each country sent independent teams from 1968 to 1988.
  5. Round-robin format play in 1980 for women's tournament
  6. Round-robin format use in 1980 for women's tournament
  7. Round Robin format use in 1984 women's tournament
  8. The final standings show both the United States and Australia were tied in points and had same margin in goal difference (both having scored 9 goals and conceded 7 goals), therefore a penalty stroke competition was played to decide the bronze medal winner, with the United States winning.