گریگوری پنکس

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search
گریگوری پنکس
معلومات شخصیت
پیدائش 9 اپریل 1903[1][2][3][4][5][6][7]  ویکی ڈیٹا پر تاریخ پیدائش (P569) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
وفات 22 اگست 1967 (64 سال)[8][2][3][4][5][6][7]  ویکی ڈیٹا پر تاریخ وفات (P570) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
بوسٹن[9]  ویکی ڈیٹا پر مقام وفات (P20) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
وجۂ وفات ابیضاض  ویکی ڈیٹا پر وجۂ وفات (P509) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
رہائش نارتھ بورو، میساچوسٹس
شہریت Flag of the United States (1795-1818).svg ریاستہائے متحدہ امریکا  ویکی ڈیٹا پر شہریت (P27) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
رکن امریکی اکادمی برائے سائنس و فنون، قومی اکادمی برائے سائنس  ویکی ڈیٹا پر رکن (P463) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
عملی زندگی
مقام_تدریس ہارورڈ یونیورسٹی
Worcester Foundation for Experimental Biology
مادر علمی ہارورڈ یونیورسٹی
کورنیل یونیورسٹی  ویکی ڈیٹا پر تعلیم از (P69) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
پیشہ ماہر فعلیات، حیاتی کیمیا دان، طبیب  ویکی ڈیٹا پر پیشہ (P106) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
پیشہ ورانہ زبان انگریزی[10]  ویکی ڈیٹا پر زبانیں (P1412) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
شعبۂ عمل حیاتیات
ملازمت ہارورڈ یونیورسٹی  ویکی ڈیٹا پر نوکری (P108) کی خاصیت میں تبدیلی کریں

گریگوری پنکس ایک امریکی ماہر حیاتیات تھا جو نیو جرسی میں وڈبائن کے علاقے میں 1903ء میں پیدا ہوا۔ وہ روسی یہودی والدین کی اولاد تھا۔ کارنل سے اس نے گریجویشن کی۔ 1927ء میں ہارورڈ سے ڈاکٹری کی ڈگری حاصل کی۔ بعد ازاں اس نے متعدد اداروں میں کام کیا جس میں ہارورڈ اور کیمبرج کے ادارے شامل ہیں۔ وہ چند سال کلارک میں پروفیسر ہو گیا۔

علمی خدمات[ترمیم]

1944ء میں اس نے "وارکسٹر فاؤنڈیشن برائے تجرباتی حیات" کے لیے اہم کردار ادا کیا۔ بعد میں وہ طویل عرصے تک ان لیبارٹریز کا پروفیسر رہا۔اس نے قریب 250 سائنسی مقالے اور ایک کتاب "تولید زرخیزی کی فتح" بھی لکھی جو 1965ء میں چھپی۔

وجہ شہرت[ترمیم]

گریگوری پنکس ہی وہ امریکی ماہر حیاتیات ہے جس نے دفع حمل کی گولی میں بنیادی کردار ادا کیا۔اس گولی کی دوہری افادیت ہے۔ ایک تو یہ کہ وہ دنیا جو کثرت آبادی کے خوف سے تھرا رہی تھی۔وہاں اس گولی کی اہمیت اظہر من الشمس سے کم نہیں۔ جبکہ دوسری طرف یہ امر بھی تسلیم شدہ ہے کہ اس گولی کی ایجاد سے زنا کی تعداد میں بہت اضافہ ہوا۔ مرد و عورت میں بغیر شادی کے جسمانی تعلق قائم کرنے کا رجحان بڑھا۔ اس سے قبل غیر شادی شدہ عورتوں کو حمل کا خوف رہتا۔ مگر اس گولی کی ایجاد سے وہ آزادانہ اپنی جسمانی لذت حاصل کرنے لگیں۔

اس پہلی ضبط تولید گولی (Envoid) سے پہلے بھی دفع حمل کی قابل اعتبار تدابیر مروج تھیں۔ اکثر معالج پہلے ڈایافراگرام(Diaphragram)کا مشورہ دیتے۔ مگر ماضی میں اور آج بھی خواتین اس سے اجتناب برتی ہیں۔ لہٰذا گزشتہ برسوں میں لاکھوں امریکی خواتین نے اپنا گناہ چھپانے کے لیے اس گولی کا استعمال کیا۔

وفات[ترمیم]

اپنی زندگی میں پنکس کو کئی سائنسی اعزازات سے نوازا گیا۔ وہ 1967ء میں بوسٹن میں فوت ہوا۔

حوالہ جات[ترمیم]

  1. اجازت نامہ: CC0
  2. ^ ا ب دائرۃ المعارف بریطانیکا آن لائن آئی ڈی: https://www.britannica.com/biography/Gregory-Pincus — بنام: Gregory Pincus — اخذ شدہ بتاریخ: 9 اکتوبر 2017 — عنوان : Encyclopædia Britannica
  3. ^ ا ب ایس این اے سی آرک آئی ڈی: https://snaccooperative.org/ark:/99166/w6pk0h8p — بنام: Gregory Goodwin Pincus — اخذ شدہ بتاریخ: 9 اکتوبر 2017
  4. ^ ا ب فائنڈ اے گریو میموریل شناخت کنندہ: https://www.findagrave.com/cgi-bin/fg.cgi?page=gr&GRid=6814316 — بنام: Gregory Pincus — اخذ شدہ بتاریخ: 9 اکتوبر 2017
  5. ^ ا ب Munzinger person ID: https://www.munzinger.de/search/go/document.jsp?id=00000011873 — بنام: Gregory Pincus — اخذ شدہ بتاریخ: 9 اکتوبر 2017
  6. ^ ا ب Brockhaus Enzyklopädie online ID: https://brockhaus.de/ecs/enzy/article/pincus-gregory — بنام: Gregory Pincus
  7. ^ ا ب بی این ایف - آئی ڈی: https://catalogue.bnf.fr/ark:/12148/cb14066138c — بنام: Gregory Pincus — عنوان : اوپن ڈیٹا پلیٹ فارم — اجازت نامہ: آزاد اجازت نامہ
  8. جی این ڈی- آئی ڈی: https://d-nb.info/gnd/13332446X — اخذ شدہ بتاریخ: 16 اکتوبر 2015 — اجازت نامہ: CC0
  9. اجازت نامہ: CC0
  10. http://data.bnf.fr/ark:/12148/cb14066138c — اخذ شدہ بتاریخ: 10 اکتوبر 2015 — اجازت نامہ: آزاد اجازت نامہ