ہریس

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search
ہریس
Al fanar harees (7797136886).jpg
متبادل نامجریش, ہریسہ, حلیم, اریزہ
قسمدلیہ
اصلی وطنمشرق وسطی
علاقہ یا ریاستمشرق وسطی
بنیادی اجزائے ترکیبیگندم, مکھن, اور گوشت (عموماََ مٹن), کبھی کبھار چکن
Harees
Al fanar harees (7797136886).jpg
متبادل نامJareesh, Hareesa, Haleem, Arizah
قسمPorridge
اصلی وطنمشرق وسطی
علاقہ یا ریاستمشرق وسطی
بنیادی اجزائے ترکیبیگندم, مکھن, and گوشت (usually گوشت), sometimes مرغی

ہریس یا جریش ( عربی: هريس آرمینیائی: հարիսա) ایک ایسا پکوان ہے جس میں گندم کو پیس کر گوشت کے ساتھ آمیزہ بنا کر بنایا جاتا ہے ۔ دنیا کے کئی ممالک میں مقبول پکوان ہے۔

مصدر و ماخذ[ترمیم]

ہریس( عربی: هريس ) فعل (عربی: هَرَسَ ) سے ماخوذ ہے جس کا مطلب ہے پیس کر یا کوٹ کر تیار کرنا۔ [1]

تاریخ[ترمیم]

ہریس کا ذکر ابن سیار الوراق کی 10 ویں صدی کی کتاب کتاب التبیخ میں ملتا ہے ، [2] نیز البغدادی کی 13 ویں صدی کی کتاب کتب التبیخ اور ابن رازن التجیبی کی 13 ویں صدی کی اندلس کھانوں کی کتاب فضالت الخیوان فی طیبات الطعام و الالوان میں بھی درج ہے ۔

ہریسہ حلیم کی بنیاد ہے۔ [3]

تیاری[ترمیم]

گندم کو رات بھر بھیگنے دیا جاتا ہے ، پھر اس میں گوشت اور مکھن یا بھیڑوں کی دم چربی کے ساتھ پانی میں آمیزہ بنایا جاتا ہے۔ باقی ماندہ مائع کو خشک کیا جاتا ہےاور پھر اس کو مرکب کو گھوٹا اور پکایا جاتا ہے۔ ہریسہ کو دار چینی ، شیرینی اور تازہ مکھن سے سجایا جاتا ہے۔

عرب پکوان[ترمیم]

ہریس

ہریسعربی کھانوں میں ایک مشہور ڈش ہے ، لوینٹ سے لیکر خلیج فارس تک ۔ یہ اکثر رمضان المبارک ، عید الفطر جیسے تہواروں اور شادیوں میں پیش کی جاتی ہے۔ [4] لبنان میں ، یہ اکثر مذہبی مواقع پر اجتماعی برتن میں پکائی جاتی ہے ، جیسے عاشورا میں ۔ عراقی کھانوں میں بھی ہریس ایک عام پکوان ہے۔

ہریس پہلے صرف گھروں میں پکنے والا پکوان تھا، اب یہ ریستوراں میں بھی پیش کی جاتی ہے۔

کشمیری کھانا[ترمیم]

ہریسہ

ہریسا یا ہریسہ کشمیر میں بہت مشہور ہے۔ یہ سردیوں کے دوران تیار کیا جاتا ہے ( چلیئ کلاں ) ، [5] عام طور پر مٹن اور چاول کے آٹے سے بنایا جاتا ہے اور اسے کشمیری روٹی کے ساتھ کھایا جاتا ہے جسے گردی کہتے ہیں۔ کشمیریوں نے اس ڈش کو پنجاب میں مشہور کیا۔ اسے بڑی دیگ میں پکایا جاتا ہے اور لکڑی سے چلنے والے تندور میں رکھا جاتا ہے۔ یہ سری نگر کے پرانے علاقوں میں بہت مشہور ہے۔ شہر سری نگر کو کشمیر میں ہریسہ کا مرکز سمجھا جاتا ہے۔

زنجبری[ترمیم]

زنجبار میں،اس پکوانکو بوکو بوکو کہا جاتا ہے اور اسے بھیڑ ، گائے کا گوشت یا چکن کے ساتھ پکایا جاتا ہے۔ [6]

مزید دیکھیے[ترمیم]

  • دلیوں کی فہرست

حوالہ جات[ترمیم]

 

  1. Team، Almaany. "Definition and meaning of Harees in Arabic - Arabic dictionary - Page 1". www.almaany.com (بزبان انگریزی). 
  2. Charles Perry, "Cooking with the Caliphs", Saudi Aramco World 57:4 (July/August 2006) full text
  3. "The haleem debate: Why some Indian Muslims are renaming the Ramzan delicacy 'daleem'". 
  4. "Archived copy". 29 نومبر 2010 میں اصل سے آرکائیو شدہ. اخذ شدہ بتاریخ 07 نومبر 2010. 
  5. Naqash، Rayan. "It's harissa time again: Savour the traditional winter delicacy that warms up cold Kashmiri mornings". Scroll.in. 
  6. Resta, Lizzie. "A Culture Seen Through Cuisine: Traditional Zanzibari Recipes." (2008). (PDF)