ہری پور

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
:چھلانگ بطرف رہنمائی، تلاش
ہری پور
صوبہ خیبر پختونخوا میں ضلع ہری پور کا محل وقوع
صوبہ خیبر پختونخوا میں ضلع ہری پور کا محل وقوع
ہری پور در پاکستان قرار گرفته‌است
ہری پور
ہری پور
متناسقات: 33°59′17″N 72°57′18″E / 33.988°N 72.955°E / 33.988; 72.955متناسقات: 33°59′17″N 72°57′18″E / 33.988°N 72.955°E / 33.988; 72.955
ملک Flag of Pakistan.svg پاکستان
پاکستان کی انتظامی تقسیم خیبر پختونخوا
پاکستان کی انتظامی تقسیم ضلع ہری پور
بلندی 520 میل (1,710 فٹ)
منطقۂ وقت پاکستان کا معیاری وقت (یو ٹی سی+5)
کالنگ کوڈ 0995
یونین کونسلوں کی تعداد 45

تاریخ[ترمیم]

ہری پور شہر کی بنیاد1821 میں سکھ جنرل ہری سنگھ نلوہ نے فوجی نقطہ نظر سے رکھی۔ ہری پور شہر میں ایک قلعہ تعمیر کیا گیا جس کی دیواریں 4 میٹر چوڑی اور16 میٹر اونچی تھیں۔ قلعہ میں داخل ہونے کے لئے چار دروازے تھے۔ ہري پور کا نام رنجيت سنگھ کےايک سِکھ جرنيل ہري سنگھ نالوا کے نام پر رکھا گيا۔ ہري پور تحصيل کو يکم جولائي 1992 ميں ضلع کا درجہ دے کر ضلع ايبٹ آباد سے علحيدہ کر دياگيا۔

جغرافیہ[ترمیم]

یہ شہر اسلام آباد سے 65 کلومیٹر اور ایبٹ آباد سے 35 کلومیٹر دور واقع ہے۔ اس ضلع کو جغرافيائي محلِ وقوع کے لحاظ سے کليدي حيثيّت حاصل ہے۔ کيونکہ يہ ضلع ہزارہ ڈویژن اور صوبہ خیبر پختونخواہ کے مابين ايک پھاٹک کا درجہ رکھتا ہے۔

ہری پور میں واقع بڑا ڈنہ نامی پہاڑ

حدور اربعہ[ترمیم]

اپنے منفرد محل وقوع کی وجہ سے ہری پور کی حدور آٹھ مختلف اضلاع سے ملتی ہیں ،جن کی تفصیل کچھ یوں ہے۔ہری پورکی مشرقی اور شمال مشرقی سرحد ضلع ایبٹ آباد سے ملتی ہے۔شمال میں یہ ضلع مانسہرہ اور شمال مغرب میں ہری پور کا ناڑا امازئی اور بیٹ گلی کا علاقہ تورغر اور بونیر سے ملتا ہے۔ہری کی مغربی سرحد میں ضلع صوابی واقع ہے۔مغرب اور جنوب مغرب میں پنجاب کے دو اضلاع اٹک اور روالپنڈی جبکہ جنوب مشرق میں وفاقی دارالحکومت اسلام آباد واقعہ ہے۔

موسم[ترمیم]

ہری پور موسم کے لحاظ سے گرم بارانی معتدلہ خطے میں شمار کیا جا سکتا ہے۔ یہاں سب سے ذیادہ گرم مہینہ جون کا ہوتا ہے، جس درجہ حرارت 40 ڈگری سینٹی گریڈ سے بھی بڑھ جاتا ہے،اس کے بعد جولائی ،اگست میں مون سون کی وجہ سے بہت ذیادہ بارشیں ہوتیں ہیں جس سے گرمی کا زور تو ٹوٹ جاتا ہے مگر حبس بہت بڑھ جاتی ہے۔ نومبر کا مہینے میں سب سے کم بارش ہوتی ہے اور پور ماہ عموماً خشک سردی میں گزرتا ہے ۔سردی کے موسم میں جنوری سب سے سرد ہوتا ہے، جب بعض دنوں میں درجہ حرارت نقظہ انجماد سے بھی گر جاتا ہے۔مارچ ،اپرئل اور سمتر،اکتوبر کے مہینوں میں موسم معتدل رہتا ہے ۔

آب ہوا معلومات برائے ہری پور
مہینا جنوری فروری مارچ اپریل مئی جون جولائی اگست ستمبر اکتوبر نومبر دسمبر سال
اوسط بلند °C (°F) 17
(63)
18
(64)
23
(73)
28
(82)
34
(93)
40
(104)
37
(99)
34
(93)
33
(91)
30
(86)
24
(75)
19
(66)
40.0
(104)
اوسط کم °C (°F) 0
(32)
06
(43)
10
(50)
14
(57)
19
(66)
24
(75)
26
(79)
24
(75)
17
(63)
10
(50)
5
(41)
0
(32)
0
(32)
اوسط عمل ترسیب mm (انچ) 63.1
(2.484)
68.8
(2.709)
78.3
(3.083)
58.7
(2.311)
32.9
(1.295)
41.1
(1.618)
162.9
(6.413)
175.0
(6.89)
78.3
(3.083)
22.6
(0.89)
15.4
(0.606)
38.5

[1]

حوالہ درکار؟

انتظامی تقسیم[ترمیم]

ضلع ہری پور کوغازی اور ہری پور دو تحصیلوں میں تقسیم کیا گیا ہے۔صوبائی اسمبلی کیلئے ضلع چار صوبائی حلقوں میں تقسیم ہے۔جو کہ بالترتیب پی کے 49،پی کے 50، پی کے 51 اور پی کے 52 کے نام سے منسوم ہیں۔قومی اسمبلی کیلئے پورے ضلع صرف ایک حلقے تک محدور ہے جو کہ این اے 19 کہلاتا ہے۔ 2002 میں منعقدہ بلدیاتی انتخابات میں ضلع ہری پور کو 45 یونین کونسلوں میں تقسیم کیا گیا ۔جن میں سے 37 ہری پور جبکہ صرف 8 تحصیل غازی میں شامل ہیں۔


ہری پور کی صنعتیں[ترمیم]

صنعتي لحاظ سے ہري پور صوبہ خیبر پختونخواہ ميں بڑ ا ضلع ہے بڑے بڑے صنعتي يونٹ جيسے ٹيلي فون فيکٹري، ہزارہ فرٹيلائزر، پاک چائنا فرٹيلائزر، تربيلا کاٹن ملز اور کئي اُوني کارخانے قائم ہيں۔ علاوہ ازيں حطار انڈسٹریل اسٹیٹ ميں کئي چھوٹے بڑے کارخانے لگائے گئے ہيں۔ ان صنعتوں کي وجہ سے يہ ضلع ملکي سطح پر معاشي ترقي ميں ايک اہم کردار ادا کر رہاہے۔

نباتات و حیوانات[ترمیم]

ہری جغرافیائی لحاظ سے انتہائی متنوع ضلع ہے۔یہاں پر زرخیز میدانی علاقوں سے ساتھ،بلندوبالاپہاڑ بھی موجود ہیں۔ایک طرف میدانی علاقے کھیتوں کا باغات سے لیس ہیں تو دوسری طرف یہاں کے پہاڑ جنگلوں ،ندی نالوں اور آبشاروں سے آباد ہیں۔اس لئے یہاں حیونات اور نباتات کی بہت سی نسلیں موجود ہیں۔

زرعی پیداوار[ترمیم]

ہری پور کا ذیادہ تر زرعی رقبہ بارانی ہے ،جہاں سال میں دو دوفع ربیع اور خریف کی فصیلیں بوئی اور کاٹی جاتی ہیں۔ان فصلوں میں گندم، مکئی ،باجرہ اور سرسوں شامل ہیں۔انکے علاوہ سرائے صالح کے مقام پر  دوڑ ندی سے  اور خانپور ڈیم سے نکالی گئی نہروں پر مشتمل علاقوں میں سبزیاں بھی کاشت کی جاتی ہیں۔یہاں پر عام کاشت کی جانے والی سبزیوں میں مٹر، ٹماٹر،آلو،پیاز، کھیرے،بینگن،کدو، لہسن،ادرک، کریلا،ٹیندا، پیٹھااور پالک شامل ہیں۔یہ ضلع خاص کر سبزي نہ صرف پشاور بلکہ اسلام آباد اور صوبہ پنجاب کو بھي مہياکرتا ہے۔


ہری پور میں پھلوں کے باغات پر کثرت سے موجود ہیں ۔ جن میں لوکاٹ، امرود، مالٹااور لیچی جیسے پھل پیدا ہوتے ہیں۔خاص کر لوکاٹ کی پیداوار کے حوالے سے ہری پور بہت مشہور ہے۔اس کے علاوہ خانپور میں پیدا ہونے والے مالٹا اپنے ذائقے میں ثانی نہیں رکھتا۔ان باغات میں بلڈ مالٹا اور شکری مالٹا حاصل کیا جاتا ہے۔

پشاور سے اسلام آباد موٹر وے اور غازی بروتھا بند پراجيکٹ کے قيام سے ضلع کي سماجي اور معاشي ترقي مزيد يقيني ہونے کا امکان ہے۔

شماریات[ترمیم]

تحصیلوں کی تعداد2: ہری پور اور غازی

ہري پور ضلع کا کُل رقبہ1725 مربع کلوميٹر ہے۔

یہاں في مربع کلو میڑ 466 افراد آباد ہيں

سال 2004-05ميں ضلع کي آبادي 803000 تھی

دیہی آبادي کا بڑا ذریعہ معاش زراعت ہے۔

کُل قابِل کاشت رقبہ 77370 ہيکٹيرزھے

ہسپتال[ترمیم]

سرکاری ہسپتال

  • ضلع ہسپتال ہری پور جی ٹی روڈ
  • ضلع ہسپتال ڈھینڈہ روڈ
  • فوجی فاونڈیشن ہسپتال ڈھینڈہ روڈ

غیر سرکاری ہسپتال

  • الغازی ہسپتال
  • یحیٰی ہسپتال
  • شاہ فیصل ہسپتال
  • abbasi foundation khalabut

ڈیم[ترمیم]

دنيابھر ميں مٹی کا بنا ہوا سب سے بڑا بند تربیلا بند اسي ضلع ميں دریائے سندھ پر تعمير کيا گيا ہے. يہ ڈيم 2200 ميگاواٹ بجلي پيدا کرتا ہے۔ اس کے علاوہ بھی ہری پور پھر میں چھوٹے بڑے ڈیموں کا جال بچھا ہوا ہے جو کہ مندرجہ ذیل ہیں۔

  • خان پور ڈیم
  • تربیلہ ڈیم
  • خیرباڑا ڈیم
  • کاہل ڈیم
  • بھُٹڑی ڈیم
  • منگ ڈیم

مزید[ترمیم]

Incomplete-document-purple.svg یہ ایک نامکمل مضمون ہے۔ آپ اس میں اضافہ کرکے ویکیپیڈیا کی مدد کر سکتے ہیں۔
  1. ^ http://en.climate-data.org/location/3671/