ہشت بہشت

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search
دیگر استعمالات کے لیے، دیکھیے ہشت بہشت (ضد ابہام)۔

ہشت بہشت قدیم اردو (دکنی) میں سیرت پر منظوم کتاب ہے جس کے مصنف محمد باقر آگاہ ہیں۔

  • ریاض السیر نثر میں جبکہ ہشت بہشت نظم میں ہے۔ اس کی تصنیف کا زمانہ 1185ھ سے 1206ھ کے درمیان ہے۔
  • یہ آٹھ حصوں پر مشتمل ہے سب مثنوی کی صورت ہیں جن کی تفصیل یہ ہے۔
  • (1)من دیپک: نور محمدی کا تذکرہ۔ سن تالیف 1185ھ۔
  • (2) من ہرن: نبوت کی بشارتوں کا بیان۔
  • (3)من موہن: پیدائش کا تذکرہ سن تالیف 1186ھ۔
  • (4)جگ موہن:حضور کی آٹھ سال کی عمر سے وفات تک کے حالات کا بیان ۔
  • (5)آرام دل :اخلاق و شمائل نبوی کا تذکرہ۔
  • (6) راحت جان:آنحضرت کے خصائص کا بیان۔
  • (7)من درپن: معجزات نبوی کا بیان۔ سن تالیف 1206ھ۔
  • (8) من جیون: آنحضور کے آداب ،آپ سے محبت، روضہ مبارک کی زیارت،اور دورد کے فضائل کا تذکرہ ہے۔
  • ان آٹھ رسالوں میں اندازہ آٹھ ہزار چھ سو پچاس(8650) کے قریب اشعار ہیں اور سرخیوں سمیت 9000 کے قریب ہیں۔[1]

حوالہ جات[ترمیم]

  1. ہشت بہشت محمد باقر آگاہ، مخطوطہ کتب خانہ جامعہ عثمانیہ حیدرآباد دکن انڈیا