انڈین نیشنل کانگریس

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
(Indian National Congress سے رجوع مکرر)
Jump to navigation Jump to search
انڈین نیشنل کانگریس
भारतीय राष्ट्रीय काँग्रेस
چیئرمین سونیا گاندھی
پارلیمانی چیئرپرسن سونیا گاندھی
لوک سبھا رہنما ملکارجن کھڑگے
راجیہ سبھا رہنما غلام نبی آزاد
(راجیہ سبھا میں قائد حزب اختلاف)
تاسیس 28 دسمبر 1885؛ 133 سال قبل (1885-12-28)
صدر دفتر 24، اکبر روڈ، نئی دہلی 110001
اخبار کانگریس سندیش
طلبا تنظیم نیشنل اسٹوڈینٹس یونین آف انڈیا
یوتھ ونگ انڈین یوتھ کانگریس
خواتین وِنگ مہیلا کانگریس
لیبر ونگ انڈین نیشنل ٹریڈ یونین کانگریس
نظریات
سیاسی حیثیت وسط بائیں بازو[2]
بین الاقوامی اشتراک پروگریسیو الائنس[3]
ای سی آئی حیثیت قومی جماعت[4]
اتحاد متحدہ ترقی پسند اتحاد (یو پی اے)
لوک سبھا میں نشستیں
52 / 545
[5](موجودہ 541 ارکان + 1 اسپیکر)
راجیہ سبھا میں نشستیں
50 / 245
(موجودہ 244 ارکان)[6]
حکومت میں ریاستوں و یونین علاقوں کی تعداد
6 / 31
)
انتخابی نشان
Hand INC.svg
ویب سائٹ
www.inc.in

انڈین نیشنل کانگریس (جسے کانگریس پارٹی اور آئی این سی بھی کہا جاتا ہے) بھارت کی ایک بڑی سیاسی جماعت ہے۔ جماعت کا قیام دسمبر 1885ء میں عمل میں آیا جب ایلن اوکٹیوین ہیوم، دادابھائی نوروجی، ڈنشا واچا، ومیش چندر بونرجی، سریندرناتھ بینرجی، مونموہن گھوش اور ولیم ویڈربرن نے اس کی بنیاد رکھی۔ اپنے قیام کے بعد یہ ہندوستان میں برطانوی راج کے خلاف جدوجہد کرنے والی ایک اہم جماعت بن گئی اور تحریک آزادی ہند کے دوران اس کے ڈیڑھ کروڑ سے زائد اراکین تھے۔

پاکستان کے بانی محمد علی جناح بھی مسلم لیگ میں شمولیت سے قبل اس جماعت میں شامل رہے ہیں جبکہ ہندوستان کی تاریخ کی کئی عظیم شخصیات بھی اس جماعت سے وابستہ رہی ہیں جن میں موہن داس گاندھی، جواہر لعل نہرو، ولبھ بھائی پٹیل، راجندرہ پرساد، خان عبدالغفار خان اور ابو الکلام آزاد زیادہ معروف ہیں۔ ان کے علاوہ سبھاش چندر بوس بھی کانگریس کے سربراہ رہے تھے تاہم انہیں اشتراکی نظریات کی وجہ سے جماعت سے نکال دیا گیا۔

بعد آزاد تقسیم کے معروف کانگریسی رہنماؤں میں اندرا گاندھی اور راجیو گاندھی معروف ہیں۔

1947ء میں تقسیم ہند کے بعد یہ ملک کی اہم سیاسی جماعت بن گئی، جس کی قیادت بیشتر اوقات نہرو گاندھی خاندان نے کی۔ 15 ویں لوک سبھا (2009ء تا حال) میں 543 میں سے اس کے 206 اراکین تھے۔ یہ جماعت بھارت کے حکمران یونائیٹڈ پروگریسیو الائنس کی سب سے اہم رکن ہے۔ یہ بھارت کی واحد جماعت ہے جس نے گزشتہ تین انتخابات (1999ء، 2004ء، 2009ء) میں 10 کروڑ سے زائد ووٹ حاصل کیے ہیں۔

پارٹی کے موجودہ سربراہ (چیئرپرسن) سابق وزیر اعظم راجیو گاندھی کے بیٹے راہل گاندھی ہیں جبکہ لوک سبھا میں اس کے رہنما ملیکا ارجن کھڑگے ہیں۔ راجیہ سبھا میں اس کی قیادت غلام نبی آزاد کر رہے ہیں۔

کانگریس کو 1975ء میں بھارت میں ہنگامی حالت کے نفاذ اور 1984ء میں سکھ مخالف فسادات (آپریشن بلیو اسٹار) کے باعث شدید تنقید کا نشانہ بھی بننا پڑا۔

کانگریس سے تعلق رکھنے والے وزرائے اعظم[ترمیم]

بیرونی روابط[ترمیم]

مزید دیکھیے[ترمیم]

حوالہ جات[ترمیم]

  1. Yogendra Yadav (21 نومبر 2018)۔ "The 4 Cs that mark Congress' decline from secularism to soft Hindutva"۔ ThePrint۔ اخذ شدہ بتاریخ 28 دسمبر 2018۔
  2. "Indian National Congress – about INC, history, symbol, leaders and more"۔ Elections.in۔ 7 فروری 2014۔ مورخہ 24 دسمبر 2018 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 3 مئی 2014۔
  3. Expected Participants[مردہ ربط], Progressive Alliance
  4. "List of Political Parties and Election Symbols main Notification Dated 18.01.2013"۔ India: Election Commission of India۔ مورخہ 24 دسمبر 2018 کو اصل (پی‌ڈی‌ایف) سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 9 مئی 2013۔
  5. "Members: Lok Sabha"۔ loksabha.nic.in۔ لوک سبھا سیکریٹریٹ۔ اخذ شدہ بتاریخ 12 مارچ 2019۔
  6. "STRENGTHWISE PARTY POSITION IN THE RAJYA SABHA"۔ Rajya Sabha۔ مورخہ 24 دسمبر 2018 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 14 جولا‎ئی 2018۔