منوہر شیام جوشی

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
:چھلانگ بطرف رہنمائی، تلاش

پیدائش: 1933ء

انتقال: مارچ 2006ء

منوہر شیام جوشی

ہندی زبان کےمعروف ادیب اور صحافی ۔ بھارت کی ریاست اتر پردیش کے ضلع الموڑہ میں پیدا ہوئے۔ ہندی زبان کے پہلے ٹیلی ویژن سیریل ’ہم لوگ‘ کا سکرپٹ1982 میں لکھا اس لیے انہیں بھارت میں ٹیلی ویژن سیریلز کا بانی سمجھا جاتا ہے۔ ٹی وی پر ان کے سلسلے وار ڈرامے ’ ہم لوگ‘ سے ہندوستان کی ٹیلیویژن انڈسٹری میں ایک نئے دور کا آغاز ہوا تھا۔ ’ہم لوگ‘ کے ذریعے ٹی وی پر سلسلہ وار ڈراموں میں پہلی بار خاندان کے پیچیدہ رشتوں، افراد کے احساسات وجذبات اور زندگی کے مختلف اتارچڑھاؤ کو خوبصورت انداز میں پیش کیا گيا تھا۔ ’ہم لوگ‘ کی مقبولیت کا اندازہ اس بات سے لگایا جاسکتا ہے کہ اس کی نشریات کے وقت ٹی وی سینٹروں کے سامنے ناظرین کی ایک بڑی بھیڑ جمع رہتی تھی اور لوگ بڑی بے صبری سے اس کا انتظار کیا کرتے تھے۔

اس کے بعد جوشی نے ’ بنیاد‘ کے نام سے ایک دوسرا سیریل لکھا اور وہ بھی خوب مقبول ہوا۔ جوشی کی تحریریں اپنے تیکھے طنز کے سبب بھی کافی مشہور تھیں۔ انہوں نے’ کّکا جی کہن‘ اور ’منگیری لال کے حسین سپنے‘ جیسے مقبول طنزیہ سیریل بھی لکھے ۔ انہوں نے ہندی فلم ’ آپّو راجہ‘ اور ’ہیے رام‘ کی کہانی بھی لکھی ۔

شیام جوشی کے چند ناولوں کو بھی کافی شہرت ملی ہے۔ صحافت کے میدان میں انہوں نے خوب طبع آزمائی کی ہے۔ وہ ’ہندوستان ویکلی‘ کے ایڈیٹر رہے اور انہوں نے سائنس وٹیکنالوجی اور سیاست سمیت بہت سے موضوعات پر بہت کچھ لکھا۔2005ء میں منوہر شیام جوشی کو ساہتیہ اکادمی ایوارڈ سے بھی نوازا گیا۔