موہرا مرادو

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
:چھلانگ بطرف رہنمائی، تلاش

موہرا مرادو ٹیکسلا، پاکستان کے نذدیک واقع ایک قدیم بدھ ستوپہ اور درسگاہ کا کھنڈر ہے۔ یہ علاقہ نہایت خوبصورت اور پہاڑوں سے گھرا ہوا ہے۔ یہاں رہنے والے بدھ راہب ایک طرف تو تنہائی میں عبادت کر سکتے تھے تو دوسری طرف ڈیڑھ کیلومیٹر پر واقع سرسکھ کے شہر بھیک مانگنے جا سکتے تھے۔ یہ شہر دوسری صدی عیسوی میں تعمیر کیا گیا تھا اور اس طرح سے کشن سلطنت سے تعلق رکھتا ہے۔

یہ کھنڈرات تین حصوں بڑے ستوپہ، نذر کے ستوپہ اور درسگاہ پر مشتمل ہیں اور ۱۹۸۰ سے یونیسکو کی عالمی ورثہ کی لسٹ میں ٹیکسلا کے تحت شامل ہیں۔

موہرا مرادو کا بڑا ستوپہ


کھدائی[ترمیم]

موہرا مرادو کے کھنڈرات کی کھدائی پہلی مرتبہ سر جان مارشل کی زیر نگرانی عبد القادر نے ۱۹۱۴ تا ۱۹۱۵ میں کی۔ بڑا ستوپہ ۷۵ء۴ میٹر بلند بنیاد پر تعمیر کیا گیا ہے۔ چھوٹا ستوپہ جو کہ نذر کا ستوپہ ہے بڑے ستوپہ کے ساتھ ہی واقع ہے۔

درسگاہ[ترمیم]

قدیمی درسگاہ میں طالب علموں کے لئے ۲۷ کمرے موجود ہیں جو کہ ایک مرکزی تلاب کے ارد گرد واقع ہیں۔ مستطیل شکل کے اس تلاب کی گہرائی نصف میٹر تھی اور اس کا پانی مذہبی مقاصد کے لئے استعمال ہوتا تھا۔ بارش کا پانی چھت سے لکڑی کے پرنالوں کے راستہ تلاب میں گرتا تھا۔ تلاب میں اترنے کے لئے چاروں طرف زینے موجود ہیں۔ درسگاہ میں ایک باورچی خانہ بھی موجود ہے اور ایک کنواں بھی جو کہ آج بھی استعمال ہو سکتا ہے۔ بدھ کے مجسمے درسگاہ کے صحن اور طالب علموں کے کمروں میں بکثرت موجود ہیں۔ درسگاہ میں ایک طرف اجتماع کا بڑا کمرہ بھی بنا ہوا ہے۔

یہ درسگاہ دو منزلہ تھی۔ دوسری منزل تک جانے کے لئے ایک کمرے میں سے زینے جاتے تھے۔ دیواروں کی چوڑائی کو دیکھ کر اندازہ ہوتا ہے کہ شائد تیسری منزل بھی بنائی گئی تھی۔

یادگار[ترمیم]

ایک خاص یادگار درسگاہ کے ایک کمرہ میں موجود ہے۔ غالبا یہ ایک استاد کی یاد میں تعمیر کی گَی تھی جو کہ اس کمرہ میں رہتا تھا۔ یہ یادگار قریبا ۴ میٹر بلند ہے اور اس کے بعض حصے رنگین تھے۔

گیلری[ترمیم]


نیز دیکھیں[ترمیم]

  1. ٹیکسلا
  2. بھڑ ماونڈ
  3. سرکپ
  4. سرسکھ
  5. جھولیاں