ریاستہائے متحدہ امریکا میں دہشت گردی

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search

2001ء کے بعد ریاستہائے متحدہ امریکا میں متعدد مسلمانوں کو دہشت گردی کے الزام میں گرفتار کیا گیا، جن میں زیادہ تر مقامی باشندے تھے۔ اکثر افراد کو ایف بی آئی اپنے ٹوڈیوں کے ذریعہ پھنسا کر جھوٹے الزامات میں گرفتار کرتی ہے جن کو امریکی عدالتوں کے ذریعہ لمبی سزائیں سنائی جاتی ہیں۔[1]

مزید دیکھیے[ترمیم]

حوالہ جات[ترمیم]

  1. پال حارث (26 مارچ 2012ء)۔ "'Taliban sympathiser' arrest prompts new questions about FBI tactics"۔ گارڈین۔