احمد زروق

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search

شیخ احمد زروق برانسی فاسیصوفی اور فقہ کے ماہر عالم دین ہیں

نام ونسب[ترمیم]

اسمِ گرامی: شیخ احمد لقب: شہاب الدین۔سلسلہ نسب اس طرح ہے۔احمد بن احمد بن محمد بن عیسیٰ البرانسی ،مشہور ،زرّوق۔

تاریخ ولادت[ترمیم]

آپ 846ھ میں خاندان برانس قبیلۂ بربر میں جو "فاس" اور" تازہ" کے درمیان میں رہائش پزیر تھا میں پیدا ہوئے۔اس لیے آپ کوبرانسی اور فاسی کہتے ہیں ۔

سیرت وخصائص[ترمیم]

آپ اپنے وقت کے فقیہ اعظم اور شیخ کامل اور زہد وتقویٰ میں یکتائے زمانہ تھے ۔ [1] آپ کے بارے میں شیخعبد الحق محدث دہلوی اپنی کتاب" مرج البحرین "میں ارشاد فرماتے ہیں! الشیخ الامام الہمام قدوۃ المتأخرین و حجۃ المتقدمین صاحب الطریق القویم والداعی لخللق اللہ الی الصراط المستقیم الامام العالم العامل القیم المعدل الفاروق شہاب الحق والحقیقۃ والشرع والدین سید احمد المغربی البرنسی عرف زروق کہ از اکابر علمائے وقت واعاظم مشایٔخ عرب دیار بود رحمۃ اللہ رحمۃ واسعۃ کاملۃ۔ [2] شاہ عبد العزیز محدث دہلوی آپ کے متعلق فرماتے ہیں ! الغرض وہ جلیل القدر شخص تھے ، ان کے مرتبہ وکمال کو لکھنا تحریر وبیان سے باہر ہے۔وہ متأ خرین صوفیہ کرام کے ان محققین میں سے ہیں جنہوں نے حقیقت وشریعت کو جمع کیا ہے۔شیخ شہاب الدین قسطلانی اور ان کے جیسے بڑے بڑےعلماء و مشایٔخ نے ان کی شاگردی پر فخر و ناز کیا ہے ۔ [3]

وصال[ترمیم]

آپکا وصال 2/ صفر المظفر 899ھ میں ہوا ۔

  1. معجم المعاجم والمشیخات،ص،548
  2. مرج البحرین ص:46
  3. بستان لمحدثین ،ص306