امبرو اگریزا

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
یہاں جائیں: رہنمائی، تلاش کریں

دنیائے ہومیوپیتھی میں ڈاکٹر ولیم بورک کی کثیر المطالعہ تصنیف " بورک میٹریا میڈیکا " کلیدی حیثیت رکھتی ہے جس کے انگریزی میں نوایڈ یشن شائع ہو چکے ہیں اور یہ دوامیٹریامیڈ یکا میں (30) نمبر پر ہے،

alt text

علامات دوا[ترمیم]

جوشے لی طبے عت اور عصبی مزاج والے بچے، اکہرے جسم والے، عصبی مزاج والے اعصاب بے حد ذکی الحسِ، صبح سارا جسم بے حسِ اور کمزور ہو، عصبی و صفرادی مزاج والی، چھرے رے بدن والی جھگڑالو عورتے ں، ے ہ دوا ان اشخاص کے لیے بالخصوص مفے د ہے جو ہسٹے رے ا کے مرے ض ہوں ے ا جنہے ں رے ڑھ کی سوزش کی شکاے ت ہو اور اس کے ساتھ نشبخی کھانسی ہو، ڈکار آئے ں، ے ا جو عمر ے ا کام کی زے ادتی کے باعث کمزور ہو گئے ہے ں، جن کے جسم مے ں خون کی کمی ہے اور جنہے ں نے ند ٹھے ک سے نہے ں آتی۔ ان بوڑھوں کے لیے بھی تر ے اق ہے جن کا جسمانی فعل بگڑ چکا ہے، کمزور ہو گئے ہے ں، حرارت عزے زی کی کمی ہے، بے حسی ہے بالخصوص کسی ایک عضو مے ں مثلاَ ہاتھ کی انگلے وں میں ے ا بازو میں، جسم کے ایک حصہّ کی شکایتیں، گانا وغیرہ سننے سے علامات میں شدّت آجاتی ہے، کھلی ہوا میں گھومنے کے بعد جسم میں تپکن اور گرمی آتی ہے، یک طرفہ شکایات۔

ذہن :۔[ترمیم]

عام لوگوں سے خوف آنا، تنہائی پسند، دوسروں کی موجودگی مے ں کوئی کان نہ کر سکے، نہاے ت شرمے لا، چہرہ بآسانی تمتما جائے، گانا سن کر رونے لگے، نا امے د، زندگی سے بے زار موہوم پے کر دکھائی دے ں، شرمے لاپن، زندگی سے کوئی پے ار نہے ں ہوتا، بے قرار، جوشے لا، بکواسی، وقت بہت سستی سے گزرتا محسوس ہو، بوڑھوں کے لیے صبح کے وقت غور و فکر مشکل ہوتا ہے، ہمیشہ نا پسندیدہ امور پر غور کرتا رہتا ہے۔

سر:۔[ترمیم]

غوروفکر مے ں سخت سمجھ بوجھ کی کمی، چکر آئے، اس کے ساتھ سر اور معدے مے ں کمزوری پے شانی مے ں دباو، دماغی کمزوری کے ساتھ اور دماغ کے آدھے بالائی حصہّ مے ں چیرنے پھاڑنے کی طرح کا درد بڑھاپے میں چکرائے، گانا سننے سے سر کی طرف دورانِ خون بڑھ جائے، قوت سماعت غے ر متوازن نکسے ر آئے بالخصوص صبح کے وقت دانتوں سے بکثرت خون گرے، بال گریں۔

معدہ:۔[ترمیم]

ڈکارے ں آئے ں، اس کے ساتھ تشنجی کھانسی، کھٹی ڈکارے ں آئے ں، جے سے کلے جہ جل رہا ہو، آدھی رات کے بعد معدے اور پے ت مے ں اپھارہ ہو، پے ٹ مے ں ٹھنڈک کا احساس۔

پیشاب :۔[ترمیم]

مثانہ اور مقعد مے ں اے ک ساتھ درد ہو،پے شاب کے سوراخ اور مقعد مے ں جلن ہو، پے شاب کی نالی مے ں اے سا محسوس ہو کہ کچھ بوندے ں نکل پڑی ہے ں، پے شاب کرتے وقت پے شاب کے راستے مے ں جلن و کھجلی ہو، پے شاب گدلا ہو، ے ہ گدلا پن پے شاب کرتے وقت بھی ہو، پے شاب مے ں بھورے رنگ کی تلچھٹ آئے۔

زنانہ :۔[ترمیم]

جنسی خواہش کی تے زی، شرمگاہ کے بے رونی حصہّ مے ں خارش، دکھن و سوجن ہو، حے ض وقت سے بہت پہلے ہو، لکورے ا جس مے ں رطوبت بکثرت اور اس کی رنگت نے لاہٹ لیے ہوئے ہو۔ رات کو مواد زے ادہ گرے۔ دو ماہوارے وں کے درمے ان ذرا سا حادثہ ہونے پر پھر خون جاری ہو جائے۔

مردانہ :۔[ترمیم]

فوطوں پر خواہش مباشدرت جگانے والی خارش، اعضاءکا بے رونی حصہّ بے حسِ اور اندر جلن ہو، خواہش کے بغے ر ہی اے ستادگی آئے۔

سانس :۔[ترمیم]

دمہ کی طرح سانس لے، ڈکاریں آئے ں، اعصابی کھانسی، تشنجی کھانسی، گلا بے ٹھ جائے، ڈکارے ں آئیں بالخصوص صبح جاگنے پر اور دوسروں کی موجودگی مے ں زیادتی، گلے، نرخرے اور سانس کی نالی میں سرسراہٹ، سے نہ گھٹنے، کھانستے دم اکھٹر جائے، کھوکھلی تشنجی کھانسی، جس میں کتا بھونکنے جیسی آواز ہو، یہ کھانیس سے نے کی گہرائی سے اُٹھے۔ کف نکالتے وقت گلے میں بندش۔

دل:۔[ترمیم]

دھڑکن ہو اس کے ساتھ سے نے مے ں دباوکا احساس جے سے وہاں کوئی گولہ رکھا ہے نبض پھڑکتی محسوس ہو، کھلی ہوا مے ں دھڑکن ہو اور چہرہ زرد پڑ جائے۔

نیند:۔[ترمیم]

تفکرات کے باعث سو نہ سکے، بے ٹھ جانا پڑے، پرے شان خواب، سوتے وقت جسم مے ں ٹھنڈک اور پھڑکن۔

جلد:۔[ترمیم]

کھجلی و دُکھن ہو، بالخصوص آلاتِ بول و تناسل کے آس پاس، جلد بے حسِ بازو سو جائے ں۔

ہاتھ پاؤں :۔[ترمیم]

انگلے وں اور ہاتھوں مے ں اے نٹھن ہو، جو کوئی چے ھز پکڑنے سے اور بڑھ جائے۔ ٹانگوں مے ں اے نٹھن ہو۔

شدّت:۔[ترمیم]

موسے قی سے غے روں کی موجودگی مے ں کوئی غے ر معمولی بات، گرم گھر مے ں صبح نو۔

کمی :۔[ترمیم]

کھلی ہوا مے ں چہل قدمی کرنا، عضو ماوف کے بل لے ٹنا، ٹھنڈے مشروبات۔

تعلقات:۔[ترمیم]

امبر کے دھوکے مے ں نہ آئے ں، اس کے بعد ماسکس اچھا کام کرتا ہے۔

مقابلہ کریں :۔[ترمیم]

اولے م سکس نم (ہچکی) سنبل، کسٹورے م، ایسافوٹے ڈا، کروکس، لیلم۔

طاقت :۔[ترمیم]

2،3 بار بار خوراک دے نا مناسب ہے۔

حوالہ:

بورک میٹریا میڈیکا