اگر بتی

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
یہاں جائیں: رہنمائی، تلاش کریں

اگر بتّی (incense) مصالحہ لگی ایسی تیلیاں ہوتی ہیں جو جلانے یا سلگانے پر خوشبو دار دھواں دیتی ہیں۔ یہ تقریباً سارے مذاہب کی مختلف رسومات میں استعمال کی جاتی ہیں۔ انکے جلنے سے بدبو کا احساس کم ہو جاتا ہے اور فضا خوشگوار تاثر دیتی ہے۔

دو سلگتی ہوئی اگربتیاں

اگر بتی سب سے پہلے چین میں استعمال ہوئی جہاں سے یہ ہندوستان آئی اور پھر ساری دنیا میں پھیل گئی۔ قدیم مصریوں نے اسے جن بھگانے اور دیوتاوں کو خوش کرنے کے لیے استعمال کیا۔

مشرقی ایشیا کی ایک عبادت گاہ میں چھت سے لٹکی ہوئی جلیبی نما مخروطی اگر بتیاں۔
ویتنام میں اگربتیاں بنانے کے بعد خشک کی جا رہی ہیں۔

مزید دیکھیئے[ترمیم]