ایگنس کاسٹس

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search


دنیائے ہومیوپیتھی میں ڈاکٹر ولیم بورک کی کثیر المطالعہ تصنیف " بورک میٹریا میڈیکا " کلیدی حیثیت رکھتی ہے جس کے انگریزی میں نوایڈ یشن شائع ہو چکے ہیں اور یہ دوامیٹریامیڈ یکا میں (17) نمبر پر ہے،

alt text

علامات دوا[ترمیم]

اس دوا کے اثر کا مرغوب ترین مرکز ہے، آلات تناسل، یہ دوا جنسی طاقت کم کرتی ہے، اسی تناسب سے کند ذہنی اور سستی اعصاب لاتی ہے۔ یو تو اس کا یہ اثر دونوں جنس پر ہوتا ہے مگر مردوں پر زیادہ ہوتا ہے، کثرت مباشرت سے بڑھا پا وقت سے پہلے ہی آجاتا ہے، جب بار بار سوزاک ہوا، ہو تو یہ دوا مفید ہے، موچ آنے اور زور پڑنے کے لیے یہ پر اثر دوا ہے، سبھی اعضا ءبالخصوص آنکھوں میں سخت خارش ہوتی ہے۔ تمباکو پینے سے عصبی مزاج نوجوانوں کو دھڑکن ہونے لگتی ہے۔

ذھن:۔[ترمیم]

جنسی مالیخولیا، موت کا خوف غمگینی او راس کے ساتھ یہ خوف کہ موت جلدی ہی آنے والی ہے، غائب دماغی جھولنے والا، پست ہمت، بو کا وہم جیسے مچھلی اور مشک کی بُو پریشان کرتی ہے، حالانکہ یہ چیزیں اس کے پاس نہیں ہوتیں، عصبی ماندگی، مستقبل کے بارے میں فکر مند جیسے کوئی مصیبت نازل ہونے والی ہے۔

آنکھیں :۔[ترمیم]

پتلیاں پھیلی ہوئیں( بیلا ڈونا) آنکھوں کے آس پاس خارش ہو چند ھیاہٹ

ناک:۔[ترمیم]

مچھلی یا مشک کی بو آئے، بانسے میں درد جو دباو سے گھٹے۔

پیٹ:۔[ترمیم]

تلی پھولی ہوئی اور پُر اذیت، پاخانہ نرم ہونے کے باوجود مشکل سے اُترے پھر اندر چلاجائے، مقعد میں گہر اشقاق، متلی اور یہ محسوس ہو کہ انڑیاں نیچے کے رخ دب رہی ہیں انہیں سہارا دینا چاہیے۔

مرد: ۔[ترمیم]

پیشاب سے نالی زرد مواد آئے۔ یاستادگی نہ ہو، نامروی، اعضاءسرد جنسی خواہش ختم( سیلی نیم، کونیم، سبال) انزال کے بغیر ہی تھوڑی منی نکلے، زور لگانے پر غدہ مزی کا رس گرے۔ قرحہ، بیضے سرد، متورم، سخت۔ پُردرد۔

زنانہ:۔[ترمیم]

قلت حیض، ہم بستری سے خوف آئے، اعضاءڈھیلے، لکوریا، جس کا کپڑے پر زرد داغ پڑے، دودھ کی قلت اس کے ساتھ پثرمردگی، بانجھ پن، ہسٹیر یا کی دھڑکن اور نکسیر ۔

تعلقات :۔[ترمیم]

مقابلہ کریں، سیلی نیم، (یسڈ فاس، کیمفر، لائیکوپوڈیم۔

خوراک:۔ ایک سے 6 پوٹینسی تک۔

حوالہ:

بورک میٹریا میڈیکا