عابر

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search

عابر (transient) کا لفظ علم طب و حکمت میں کسی بھی ایسی کیفیت کے لیے اختیار کیا جاتا ہے کہ جو آئے اور گزر جائے یعنی یوں کہ سکتے ہیں کہ کوئی بھی ایسی کیفیت جو ذود گزر ہو اسے طب میں عابر کہا جاتا ہے، مثال کے طور پر غشی (syncope) کی کیفیت وغیرہ۔ عابر کا لفظ عبر سے بنا ہے اور اسی سے بنے ہوئے دیگر الفاظ جیسے عبور وغیرہ اردو میں مستعمل بھی ہیں۔