مائٹو کونڈریا

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
:چھلانگ بطرف رہنمائی، تلاش

خلوی حیاتیات میں مائٹو کونڈریا جھلی میں لپٹا ہوا ایک ایسا عضو ہے جو یوکیریوٹ خلیوں میں پایا جاتا ہے۔ مائٹو کونڈریا کا حجم نصف سے دس مائیکرو میٹر تک ہو سکتا ہے۔ مائٹو کونڈریا کو بعض اوقات خلوی توانائی کا مرکز بھی کہا جاتا ہے کیونکہ مائٹو کونڈریا ایڈینوسین ٹرائی فاسفیٹ یعنی اے ٹی پی تیار کرتے ہیں۔ اے ٹی پی کو کیمیائی توانائی کے طور پر استعمال کیا جاتا ہے۔ توانائی بنانے کے علاوہ یہ اشارہ بازی یعنی سگنلنگ، خلوی تفریق، خلوی موت، خلوی دورانیہ اور خلوی بڑھوتری میں بھی اپنا کردار ادا کرتے ہیں۔ اس کے علاوہ مائٹو کونڈریا جسم میں مختلف بیماریاں پیدا کرنے میں شامل ہوتے ہیں۔ ان بیماریوں میں مائٹو کونڈریا کی خرابیاں، دل کے مسائل اور بڑھاپا شامل ہیں۔