مقناطیسی اصدائی تصویرہ

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search
انسانی سر (دماغ) کا ایک مقناطیسی اصدائی تصویر سازی کا منظر، جو اندرونی اعضاء کو ایسے دکھا رہا ہے کہ جیسے سر کو طولی طور پر کاٹ کر دیکھا جا رہا ہو۔

مقناطیسی اصدائی تصویر سازی یا مقناطیسی اصدائی تصویرہ کو انگریزی میں magnetic resonance imaging کہتے ہیں اور اس کا اختصار MRI کیا جاتا ہے۔ یہ دراصل علم کیمیاء میں بکثرت استعمال ہونے والی ایک طراز، مرکزی مقناطیسی اصداء کی ہی ایک قسم ہے۔ طب میں یہ تکنیک (technique) بہت زیادہ اہم ہے اور اس کی مدد سے بلا تجاوز (non-invasive) یعنی مریض کے جسم میں کوئی شے (سوئی، نشتر یا عکاسہ وغیرہ) داخل کیے بغیر تشخیص کی جاسکتی ہے اور اندرونی اعضاء کی تصویر کشی (تصویرہ یا imaging) کی جاسکتی ہے۔ مقناطیسی اصدائی تصویر سازی کی مدد سے جسم میں ہونے والی کسی بھی امراضیاتی اور / یا فعلیاتی تبدیلی کو باآسانی اور واضع طور پر ایک کمپیوٹر کی سکرین پر دیکھا جاسکتا ہے۔

اصطلاح term
مقناطیسی
اصداء
تصویر سازی

magnatic
resonance
imaging


مزید دیکھیے[ترمیم]