مندرجات کا رخ کریں

گوئٹے مالا خواتین قومی فٹ بال ٹیم

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
گوئٹے مالا خواتین قومی فٹ بال ٹیم
معلومات
محل وقوع
ملک گواتیمالا   ویکی ڈیٹا پر (P17) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
شماریات

گوئٹے مالا کی خواتین کی قومی فٹ بال ٹیم کو فیڈریشن نیسیونل ڈی فٹ بال ڈی گوئٹے مالا کے زیر کنٹرول ہے۔وہ 1999ء یو این سی اے ایف چیمپئن شپ جیتنے والی کوسٹا ریکا کے ساتھ وسطی امریکی خطے میں خواتین کی اعلی قومی فٹ بال ٹیموں میں سے ایک ہیں۔ [1]

تاریخ[ترمیم]

1997ء میں پہلی قومی خواتین لیگ لیگ کی تشکیل کے بعد، گوئٹے مالا کی خواتین کی قومی ٹیم تشکیل دی گئی اور 1998ء میں اس نے باضابطہ بین الاقوامی میچ کھیلنا شروع کیے، جن میں سے پہلا 19 جولائی 1998ء کو ہونڈوراس کے خلاف 11-0 جیت تھا۔ ایل سلواڈور اور ہیٹی کے خلاف مزید دو جیت کے بعد، گوئٹے مالا نے 1999ء کے ویمنز ورلڈ کپ کے فائنل کوالیفکیشن ٹورنامنٹ میں جگہ بنائی، جہاں وہ چوتھے نمبر پر رہے۔

جون 1999ء میں پہلی یو این سی اے ایف ویمن چیمپئن شپ گوئٹے مالا سٹی میں منائی گئی، جہاں ہونڈوراس اور نکاراگوا کے خلاف جیت اور کوسٹا ریکا کے خلاف ڈرا کے بعد، میزبان ٹیم نے فائنل میں 2-0 سے شکست دے کر ٹائٹل جیت لیا، جس میں 12,000 تماشائیوں کے سامنے اسٹیڈیو میٹیو فلوریس۔ [2] گوئٹے مالا کی کپتان میگنولیا پیریز ٹاپ اسکورر اور ٹورنامنٹ کی بہترین کھلاڑی رہی۔ گوئٹے مالا کو 2000ء کے ویمنز گولڈ کپ میں مدعو کیا گیا تھا، جہاں وہ چین میکسیکو اور کینیڈا کے خلاف پہلے راؤنڈ کے تینوں میچ ہار گئے تھے۔

گھریلو سرزمین میں 2001ء کے وسطی امریکی کھیلوں میں، گوئٹے مالا نے اپنا پہلا راؤنڈ گروپ جیتا لیکن پھر ہونڈوراس کے خلاف سیمی فائنل میں پنالٹی کک پر اسے ہٹا دیا گیا، جس کے بعد گوئٹے مالا کے پاس ایل سلواڈور کو شکست دے کر کانسی کا تمغا تھا۔ [3]

گوئٹے مالا 2004ء کے اولمپک کھیلوں کے لیے اہلیت حاصل کرنے میں داخل ہوا، جہاں انھوں نے نومبر 2003 میں بیلیز کو شکست دینے اور پہلے راؤنڈ میں پاناما کے خلاف ڈرا کرنے کے بعد حتمی اہلیت کے ٹورنامنٹ میں جگہ حاصل کی، لیکن مقابلے میں اس کی شرکت روک دی گئی اور ٹیم کی جگہ پاناما نے لے لی، کیونکہ فیفا نے جنوری 2004ء میں فروری 2004ء تک گوئٹے مالا پر تمام بین الاقوامی مقابلوں سے پابندی لگا دی تھی۔ 2004ء اور 2010ء کے درمیان، گوئٹے مالا کی خواتین کی ٹیم کی بین الاقوامی مقابلوں میں شرکت بہت کم تھی، صرف دو مسابقتی میچ کھیلے گئے، دونوں 2006ء میں 2006ء کے ویمنز گولڈ کپ کے لیے اہلیت کے دوران کھیلے گئے تھے۔ ف تگ ے ھ ءجیکہلوس عد رف

2010ء میں گوئٹے مالا نے پورٹو ریکو کے مایاگیز میں 2010ء کے سنٹرل امریکن اور کیریبین گیمز میں 2 جیت، 1 ڈرا اور 2 ہار کے ریکارڈ کے ساتھ کانسی کا تمغا جیتا۔ [4] اس سال کے آخر میں، گوئٹے مالا نے چوتھے ویمن گولڈ کپ میں حصہ لیا اور کوسٹا ریکا، ریاستہائے متحدہ اور ہیٹی کے خلاف اپنے پہلے راؤنڈ کے تینوں میچ ہار گئے۔

گوئٹے مالا نے 2012ء کے وسطی امریکی پری اولمپک ٹورنامنٹ کی میزبانی کی، جہاں انھوں نے ایل سلواڈور کو 2-1 سے شکست دینے کے بعد کوسٹا ریکا کے پیچھے دوسرے نمبر پر آکر فائنل مرحلے میں جگہ بنائی۔ [5] وینکوور میں ہونے والے فائنل کوالیفکیشن ٹورنامنٹ میں، گوئٹے مالا میکسیکو اور امریکا سے ہار گیا اور ڈومینیکن ریپبلک کو شکست دی، اپنے گروپ میں تیسرے نمبر پر رہا اور 2012ء کے اولمپک ٹورنامنٹ سے باہر ہو گیا۔

حوالہ جات[ترمیم]

  1. Source: http://www.elsalvador.com/noticias/edicionesanteriores/junio14/DEPORTES/depor12.html
  2. "Noticias de deportes en Costa Rica" 
  3. "Juegos Centroamericanos 2001 (Guatemala)" 
  4. "Fedefut Guatemala – GUATEMALA GANA MEDALLA DE BRONCE EN LOS JUEGOS CENTROAMERICANOS y DEL CARIBE" 
  5. "Guatemala earns last place in Vancouver"۔ CONCACAF۔ 8 October 2011۔ 11 اکتوبر 2011 میں اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 10 اکتوبر 2011