راشد علی گیلانی

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
:چھلانگ بطرف رہنمائی، تلاش

پیدائش: 1889ء

انتقال: 1963ء


عراقی رہنما ۔ ترکی لا کالج میں تعلیم حاصل کی ۔ 1932ء میں شاہ عراق کے پرائیوٹ سیکرٹری مقرر ہوئے۔ 1933ء میں وزارت عظمی کے عہدے پر متمکن ہوئے۔ 1935 میں وزارت داخلہ اور وزارت عدلیہ کے عہدوں پر سرفراز ہوئے۔ 1935 میں سیاسی کشمکش اور ہنگاموں کی بدولت جلاوطن کر دئے گئے۔

سید راشد علی عراق میں برطانیہ کی مداخلت کو ناپسندکرتے تھے ۔ انہوں نے 4 اپریل 1941ء میں علم بغاوت بلند کرکے حکومت پر قبضہ کر لیا اور امر عبداللہ کو ریجنٹ کے عہدے سے علیحدہ کر دیا ۔حکومت برطانیہ نے عراق کے تیل کے چشموں کی حفاظت کے بہانے بصرہ میں اپنی فوج اتار دی اور انقلاب عراق کے ایک ہی ماہ بعد سید راشد علی کو عراق سے بھاگنا پڑا ۔ 1946ء کے آغاز میں موصوف ایک فرانسیسی جہاز پر ملازم ہو کر مارسیلز سے سعودی عرب پہنچنے میں کامیاب ہوئے۔ جولائی 1958ء میں عراقی انقلاب کے بعد سید راشد علی واپس بغداد آگئے لیکن کچھ عرصہ بعد عراق کو متحدہ عرب جموریہ میں مدغم کرنے کے سوال پر جنرل عبدالکریم قاسم سے آپ کا اختلاف ہوگیا اور آپ کو دوبارہ ترک وطن کرکے مصر جانا پڑا ۔ قاہرہ ہی میں انتقال ہوا۔