آلین جنسبرگ

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search
آلین جنسبرگ
Allen Ginsberg 1979 - cropped.jpg
Ginsberg in 1979
پیدائشIrwin Allen Ginsberg
3 جون 1926(1926-06-03)
نیوآرک، نیو جرسی, U.S.
وفاتاپریل 5، 1997(1997-40-05) (عمر  70 سال)
نیو یارک شہر, U.S.
پیشہWriter, poet
تعلیمکولمبیا یونیورسٹی (B.A.)
ادبی تحریکBeat literature, hippie
Confessional poetry
اہم اعزازاتNational Book Award (1974)
Robert Frost Medal (1986)
ساتھیPeter Orlovsky (1954–1997; Ginsberg's death)

دستخط

آلین جنسبرگ (انگریزی: Allen Ginsberg)(3 جون 1926ء تا 5 اپریل 1997ء) امریکا کے شاعر، فلسفی اور مصنف تھے۔ وہ 1940ء کی دہائی میں کولمبیا یونیورسٹی میں زیر تعلیم تھے۔ اس دوران میں ان کی دوستی ولیم ایس بوروز اور جیک کیروک سے دوستی بڑھائی اور اس طرح بیٹ نسل کا آغاز ہوا۔ انہوں نے بڑے جوش اور خروش سے عسکریت پسندی، معاشی مادیت پسندی اور جنسی جبر کے خلاف آواز بلند کی۔ انہوں نے متضاد ثقافت کی پرزور مخالفت کی۔ ڈرگس، دفتری حکومت سے دشمنی کا مظاہرہ کیا اور مشرقی مذاہب کے کھلے پن پر بھی تبصرہ کیا۔[1][2] ان کا شاہ کار ان کی نظم ہول ("Howl" ) ہے جس میں ریاستہائے متحدہ امریکا میں سرمایہ داری نظام اور مطابقت کے جابرانہ اور تباہ کن طاقتوں کے خلاف آواز اٹھائی ہے۔[3][4][5] جنسبرگ بدھ مت کے ماننے والے تھے۔ انہوں مشرقی مذاہب کا بہت زیادہ مطالعہ کیا تھا۔ ان کی زندگی بہت سادہ تھی۔ وہ اپنے لیے پہنے ہوئے کپڑے خریدتے تھے اور نیو یارک شہر کے باہر ایک گاوں میں رہتے تھے۔[6]

بولڈر کاؤنٹی، کولوراڈو میں ناروپا یونیورسٹی کے بانی چوگیان ترونگپا ان کے اساتذہ میں سے تھے جنہوں نے ان کو بہت زیادہ متاثر کیا ہے۔[7] ترونگپا کے کہنے پر ہی جنسبرگ اور انے والڈمین نے 1974ء میں دی جیک کیروک اسکول آف ڈس امبوڈیز پوئٹکس شروع کیا۔[8]

انہوں نے جنگ ویتنام کے خلاف اور ڈرگس کی جنگ پر جم پر سیاسی احتجاج میں حصہ لیا۔ وہ ایک دہائی تک کئی مظاہروں، احتجاجوں میں شریک رہے اور دوران میں جو کچھ ان کو ناگوار سب کے خلاف بولے۔[9]

حالات زندگی[ترمیم]

ابتدائی ایام زندگی[ترمیم]

آلین جنسبرگ کی ولادت نیوآرک، نیو جرسی کے ایک یہودی[10] میں ہوئی۔ ان کی پرورش پیٹرسن، نیو جرسی کے قریب کسی جگہ ہوئی۔[11] ان کے والد لوئس جنسبرگ کی دوسری اولاد تھے۔[12] لوئس ایک اسکول میں معلم تھے۔ وہ کبھی کبھی شعر بھی کہتے تھے۔

عہد شباب ہی میں وہ نیو یارک ٹائمز میں دوسری جنگ عظیم اور ملازمین کے حقوق جیسے سیاسی موضوعات پر خطوط لکھنے لگے۔[13] اسکول کے زمانے میں ہی وہ والٹ وہٹ مین سے بہت زیادہ متاثر ہوئے۔[14] انہوں نے 1943ء میں ایسٹ سائڈ ہائی اسکول سے گریجویشن مکمل کی اور مونٹکلئر اسٹیٹ یونیورسٹی میں داخلہ لیا۔ مگر انہیں ایک یہودی تنظیم کی طرف سے کولمبیا یونیورسٹی کے لیے اسکالرشپ مل گئی اور انہوں نے اپنی یونیورسٹی بدل لی۔[12]

حوالہ جات[ترمیم]

  1. "Ginsberg, Allen (1926–1997)". glbtq.com. مارچ 13, 2007 میں اصل سے آرکائیو شدہ. اخذ شدہ بتاریخ اگست 9, 2015. 
  2. Ginsberg, Allen (2009)، Howl, Kaddish and Other Poems۔ London: Penguin Books Ltd, pp. 0.
  3. Ginsberg, Allen (2000)، Deliberate Prose: Selected Essays 1952–1995۔ Foreword by Edward Sanders. New York: Harper Collins, pp. xx–xxi.
  4. de Grazia, Edward. (1992) Girls Lean Back Everywhere: The Law of Obscenity and the Assault on Genius۔ New York: Random House, pp. 330–31.
  5. About Allen Ginsberg۔ pbs.org. دسمبر 29, 2002
  6. "Allen Ginsberg Project – Bio". allenginsberg.org. اخذ شدہ بتاریخ فروری 18, 2013. 
  7. Miles, pp. 440–44.
  8. Miles، pp. 454–55.
  9. Ginsberg, Allen Deliberate Prose، the foreword by Edward Sanders, p. xxi.
  10. Pacernick, Gary. "Allen Ginsberg: An interview by Gary Pacernick" (فروری 10, 1996)، The American Poetry Review، Jul/Aug 1997. "Yeah, I am a Jewish poet. I'm Jewish."
  11. ^ ا ب Hampton، Wilborn (اپریل 6, 1997). "Allen Ginsberg, Master Poet Of Beat Generation, Dies at 70". New York Times. مارچ 11, 2008 میں اصل سے آرکائیو شدہ. اخذ شدہ بتاریخ اپریل 14, 2008. 
  12. Miles