اخلاق ناصری

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search


نصیر الدین طوسی کی تصنیف جو حاکم قہستان کی فرمائش پر1235ء میں لکی گئی۔ اس کا ماخذ،ابن مسکور کی تصنیف، طہارۃ الاعراق فی تہذیب الاخلاق ہے۔ طوسی نے بعض رسائل کا اضافہ بھی کیا ہے۔ اس کا تعلق حکمت عملی اور اخلاق سے ہے۔ مذہبی و صوفیانہ مسائل کی آمیزش ضمنی ہے۔