اگنی پنجم

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search
اگنی پنجم
قسم Intercontinental ballistic missile[1][2]
مقام آغاز Flag of India.svg بھارت
تاریخ ا استعمال
استعمال میں 2014[3][4] (testing)
استعمال از Strategic Forces Command
تاریخ صنعت
صنعت کار تنظیم برائے دفاعی تحقیق و ترقی (DRDO),
Bharat Dynamics Limited (BDL)
لاگت اکائی 500 ملین (امریکی $8 ملین)[5]
تفصیلات
وزن 50,000 kg[6]
لمبائی 17.5 m[7]
قطر 2 میٹر (6 فٹ 7 انچ)
Warhead Nuclear
Warhead وزن 1,500 کلوگرام (53,000 oz)[8]

انجن Three stage solid fuel
Operational
range
Over 5,000 کلومیٹر (16,000,000 فٹ)[1][9][10]
Speed Mach 24[11]
Guidance
system
Ring laser gyroscope and inertial navigation system, optionally augmented by GPS. Terminal guidance with possible radar scene correlation
Launch
platform
8 × 8 Tatra TEL and rail mobile launcher (canisterised missile package) [12]
Transport Road or rail mobile

اگنی فائیو بھارت کا 2013ء میں متعارف کردہ بین البراعظمی میزائل ہے جو 5000کلومیٹر تک نیوکلیر ہتھیار لے جاسکتا ہے۔

حوالہ جات[ترمیم]

  1. ^ ا ب Rajat Pandit۔ "Eyeing China, India to enter ICBM club in 3 months"۔ The Times of India۔ اخذ شدہ بتاریخ 19 اپریل 2012۔
  2. Rahul Datta۔ "With Russian help, India to enter ICBM club soon"۔ Dailypioneer۔ مورخہ 25 دسمبر 2018 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 20 اپریل 2012۔
  3. نقص حوالہ: ٹیگ <ref>‎ درست نہیں ہے؛ IExpress نامی حوالہ کے لیے کوئی مواد درج نہیں کیا گیا۔ (مزید معلومات کے لیے معاونت صفحہ دیکھیے)۔
  4. "DRDO Lab Develops Detonator for Nuclear Capable Agni-V Missile As It Gets Ready For Launch"۔ Defencenow۔
  5. "India has all the building blocks for an anti-satellite capability"۔ India today۔ مورخہ 25 دسمبر 2018 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 12 اگست 2012۔
  6. T.S. Subramanian۔ "Preparations apace for Agni V launch"۔ The Hindu۔ مورخہ 25 دسمبر 2018 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 19 اپریل 2012۔
  7. "DRDO plans to test 10 missiles this year"۔ The Times of India۔ اخذ شدہ بتاریخ 19 اکتوبر 2011۔
  8. Rajat Pandit۔ "Canister storage gives N-capable Agni-V missile flexibility"۔ The Times of India۔ مورخہ 25 دسمبر 2018 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 20 اپریل 2012۔
  9. "India eyes Agni-VI to double range"۔ Asianage۔ مورخہ 25 دسمبر 2018 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 29 اپریل 2012۔[مردہ ربط]
  10. نقص حوالہ: ٹیگ <ref>‎ درست نہیں ہے؛ Deccan نامی حوالہ کے لیے کوئی مواد درج نہیں کیا گیا۔ (مزید معلومات کے لیے معاونت صفحہ دیکھیے)۔
  11. Raj Chengappa۔ "India's most potent missile Agni V all set for launch"۔ The Tribune۔ مورخہ 25 دسمبر 2018 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 19 اپریل 2012۔
  12. Y. Mallikarjun, Agni-V design completed; to be test-fired in 2010, The Hindu, 27 November 2008