باقیات صالحات عربی کالج

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search
مدرسہ باقیات الصالحات
Tomb of A'la Hadrat Shah Abdul Wahhab.jpg
اعلیٰ حضرت حضرت شاہ عبدالوہاب صاحب کا مقبرہ
قسماسلامی یونیورسٹی
قیام1857
چانسلرمجلس شوری
پتہمدرسہ باقیات الصالحات عربی کالج، سری پورم، سیداپت، تمل ناڈو، 632004 بھارت، ویلور، تمل ناڈو، بھارت
12°55′11″N 79°08′08″E / 12.9196709°N 79.135623°E / 12.9196709; 79.135623
عرفیتباقیات

مدرسہ الباقیات الصالحات، ہندوستان کی ریاست تمل ناڈو کے ایک شہر ویلور میں ایک اسلامی دینی مدرسہ ہے جو 1857 میں قائم کیا گیا تھا۔

اس مدرسے کو شمالی ہندوستان کے مدرسہ دارالعلوم کی ہی طرح "جنوبی ہندوستان کا مدرسہ" کہا جاتا ہے۔ مدرسہ کے بانی عبدالوہاب مدورائے میں مدورائی مقبرہ ہارکیٹس کے تیسرے ، عارف بیت اللہ قطب الزمان سید عبد السلام ابراہیم (سلیم حضرت) کے طالب علموں میں سے ایک ہیں۔

مدرسہ کے اماموں نے جنوبی ہندوستان میں مضبوط اسلامی ادارہ تشکیل دینے میں اہم کردار ادا کیا۔ مولانا عبدالحمید بکاوی کے قرآن کے مشہور تمل ترجمہ کا اعتراف اس مدرسہ کے نامور مفتیوں اور علمائے کرام نے کیا۔

اس مدرسے نے سنی اسلام کی تشہیر کی تھی اور اس کی بنیاد شاہ عبدالوہاب نے رکھی تھی جس اعلی حضرت بھی کہا جاتا ہے۔ اس مدرسہ کے فارغ التحصیلوں کو باقوی (باقوی ، بکوی ، باکاوی) کے نام سے جانا جاتا ہے۔ اس مدرسہ نے بہت سارے مشہور اسلامی اسکالرز تیار کیے تھے۔ [1] [2]

حوالہ جات[ترمیم]

  1. See al-Hasani, 'Abd al-Hai, Nuzhat al-Khatir; vol. 8, entry no. 331, pp. 338-39
  2. MAGAZINE AL BAQIYATH 2014 URDU/TAMIL/MALYALAM