بے گھری

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search
ایک بے گھر خاندان کولکاتا، بھارت کی سڑکوں پر سوتے ہوئے۔ (اوپر)؛ ایک بے گھر آدمی پیرس، فرانس میں (نیچے)

بے گھری ایک ایسی صورت حال ہے جس میں لوگ کسی مستقل رہائش جیسے کہ گھر یا اپارٹمنٹ کے بغیر گزارا کرتے ہیں۔ وہ لوگ جو بے گھر ہیں اکثر اس قابل نہیں ہوتے کہ وہ باقاعدہ، محفوظ اور عند الضرورت خانہ سازی سے فائدہ اٹھا سکیں۔[1] بے گھر کی تعریف ملک در ملک مختلف ہوتی ہے۔ یہ کبھی ایک ملک میں علاقہ جات اور قانونی دائروں کے حساب سے مختلف ہو سکتی ہے۔[2] بے گھر کی اصطلاح میں وہ لوگ شامل ہو سکتے ہیں جن کا بنیادی رات کے وقت کی رہائش ایک رات کا آسرا، گھریلو تشدد کا آسرا، کسی موٹل میں لمبے وقت کی رہائش، ایک گاڑی، موڑکر رکھنے والا گھر، کارڈ بورڈ باکس، ٹینٹ سٹی، ٹارپولین، شانٹی ٹاؤن ڈھانچے جو رد کردہ مواد سے بنا ہو یا پھر اور کوئی وقتیہ خانہ سازی کی صورت حال۔ مملکت متحدہ کے خیراتی ادارے کرائسیس کے مطابق گھر صرف رہنے اور دیکھے جانے والی جگہ کا نام نہیں؛ وہ لوگوں کو ان کی جڑیں، شناخت، صیانت، وابستگی اور جذباتی خوشحالی بھی فراہم کرتا ہے۔[3] ریاستہائے متحدہ کی بے گھری شماری کے مطالعات[4][5] میں وہ لوگ بھی شامل ہیں جو عوامی یا نجی جگہوں پر سوتے ہیں، جو عام طور سے انسانوں کے سونے کے ٹھکانوں کے لیے نہیں بنائے گئے ہیں۔ [6][7] کئی ادارہ جات بے گھروں کو اپنی خدمات پیش کرتے ہیں۔

مزید دیکھیے[ترمیم]

حوالہ جات[ترمیم]

  1. ریاستہائے متحدہ کے محکمہ خانہ سازی و شہری ترقی، "بے گھری کی وفاقی تعریف"
  2. "Glossary defining homelessness"۔ مورخہ 25 دسمبر 2018 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 17 ستمبر 2014۔
  3. United Kingdom charity Crisis
  4. Bogard, Cynthia J., "Advocacy and Enumeration: Counting Homeless People in a Suburban Community", American Behavioral Scientist September 2001 vol. 45 no. 1 105–120
  5. Gabbard, W. Jay; et al., "Methodological Issues in Enumerating Homeless Individuals", Journal of Social Distress and the Homeless Volume 16, Number 2 / May 2007 90–103
  6. Office of Applied Studies, ریاستہائے متحدہ کا محکمہ صحت اور انسانی خدمات، "Terminology"
  7. "United States Code, Title 42, Chapter 119, Subchapter I, § 11302"۔ مورخہ 25 دسمبر 2018 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 17 ستمبر 2014۔