جسمانی اثبات

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search
دو خواتین کا کانسی کا بنا مجسمہ Jag tänker på mig själv - ویکوہ ( 'میں خود کے بارے میں سوچ رہی ہوں - Växjö') جسے میریئین لنڈبرگ ڈے گیئر نے 2005ء میں تیار کیا ہے۔ یہ ویکوہ، سویڈن کے فنی عجائب خانے کے باہر نصب کیا گیا ہے۔ [1][2] مجسمے میں ایک بہت ہی دبلی خاتون اور ایک بہت ہی موٹی خاتون ساتھ دکھتی ہیں، جو موجودہ سماج کے اس جنون پر ایک طمانچے کے مانند ہے کہ ہم کس طرح دکھتے ہیں۔ یہ مسجمہ شہر میں تنازع کا سبب بنا، جس کی وجہ سے مجسمہ کے ساتھ توڑ پھوڑ اور بعد ازاں مرمت 2006ء میں ہو چکی ہے۔[حوالہ درکار]
اس تصویر میں میریام لینک کے مجسمے یولانڈا کی عکاسی کی گئی ہے۔ سنگ تراش خاتون کا دعوٰی ہے کہ یولانڈا "نسوانی اعتماد کی علامت بن چکی ہے ... یولانڈا اپنے لیے موجود پر قائم رہتی ہے اور کسی کے اعتراض پر توجہ نہیں دیتی۔"[3]


جسمانی اثبات (انگریزی: Body positivity) ایک سماجی تحریک ہے جو اس یقین کے ساتھ قائم ہے کہ سبھی انسانوں کے من میں مثبت جسمانی تصویر قائم رہنا چاہیے۔ یہ تحریک ان سماجی طور طریقوں کو للکارتی ہے جو کسی ایک سوچ اور تنگ زاویۂ فکر پر زور دیتے ہیں۔ یہ تحریک اس بات پر زور دیتی ہے کہ سبھی جسموں کو قبول کر لیا جانا چاہیے اس سوچ کے بغیر کے جسمانی صلاحیتیں، قد و قامت، صنف، نسل یا ظاہری شکل و صورت کیا ہے۔ یہ تحریک اس بات کی کوشش کرتی ہے کہ لوگوں کے برتاؤ اور ان کے طرز فکر میں فرق لایا جائے، بالخصوص وہ مصنوعات اور خدمات سے متعلق جو یہ کوشش کرتی ہیں کہ جسم سے جڑے خوف سے منافع خوری کی جائے، جیسے کہ جسمانی تندرستی، صحت بنانے کے کلبوں کی خدمات، وزن گھٹانے کی مصنوعات، وغیرہ۔[4]

مزید دیکھیے[ترمیم]

حوالہ جات[ترمیم]

  1. "Bronskvinnorna". www.vaxjo.se. 22 اکتوبر 2020 میں اصل سے آرکائیو شدہ. اخذ شدہ بتاریخ 14 جولا‎ئی 2020. 
  2. "Obesity over time". OpenLearn. 
  3. "Yolanda Art Print". Saatchi Art (بزبان انگریزی). اخذ شدہ بتاریخ 12 اگست 2019. 
  4. Smithee، Alan (جون 2019). "How will body image trends influence the fitness market in Spain by 2035". Researchgate.