دودھ کی چائے

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
بلبلی جائے (ببل ٹی)

دودھ کی چائے (انگریزی: Milk tea) کئی ملکوں میں دست یاب عوامی طور مقبول مشروب کا نام ہے۔ اس کے دو اجزا یعنی دودھ اور چائے کا تناسب بھی ہر جگہ اور ثقافت میں مختلف ہے۔ دودھ کی چائے کے ساتھ کئی لازمی اور اختیاری اجزا ہو سکتے ہیں۔ مثلًا بیش تر لوگ اس چائے میں شکر لیے بھی ڈالتے ہیں، تاہم کچھ لوگ اس کے بنا ہی اسے پی لیتے ہیں۔ اس کے علاوہ دیگر اجزا میں شہد، نمک، ادرک، الائجی وغیرہ شامل ہو سکتے ہیں۔[1] فوری دودھ بننے والے دودھ کی چائے کا پاؤڈر بڑے پیمانے سے بازار میں ملتا ہے۔ [2]

کیمیائی مطالعے سے متعلق ایک تحقیقی رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ کچھ لوگ کہتے یہں چائے میں دودھ ملانے سے اس کے طبی فوائد ختم ہوجاتے ہیں اور صحت پر کوئی اثر نہیں ہوتا، دراصل ایسی سوچ غلط ہے، دودھ میں کیلشیم پایا جاتا ہے جس کے استعمال سے ہڈیاں مضبوط ہوتی ہیں اور یقینی طور پر یہ صحت کے لیے بہت مفید ہے[3]۔

چائے میں کچھ مخصوص مرکبات سے جی متلانے کی شکایت بھی ہوسکتی ہے خصوصاً اگر بہت زیادہ مقدار میں پی جائے یا خالی پیٹ اس کا استعمال کیا جائے۔ ٹینن چائے کے تلخ اور خشک ذائقے کا باعث بننے والا جز ہے اور اس سے ہی نظام ہاضمہ متاثر ہوسکتا ہے جسے جی متلانے اور پیٹ میں درد جیسی شکایات ہوسکتی ہیں۔[4]

مزید دیکھیے[ترمیم]

حوالہ جات[ترمیم]

  1. "Franchise battle stirring up Vietnamese milk tea market". VietNamNet. ستمبر 15, 2017. اخذ شدہ بتاریخ ستمبر 22, 2017. 
  2. Zeng، Z.؛ Wang، J. (2010). Advances in Neural Network Research and Applications. Lecture Notes in Electrical Engineering. Springer Berlin Heidelberg. صفحہ 894. ISBN 978-3-642-12990-2. اخذ شدہ بتاریخ ستمبر 22, 2017. 
  3. چائے میں دودھ ملانے سے طبی فوائد ختم
  4. بہت زیادہ چائے پینا نقصان دہ بھی ہوسکتا ہے