رسالہ (عسکریہ)

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search

Cavalry

گھڑ سوار فوج جو میدان جنگ میں دشمن کا مقابلہ کرتی تھی۔ جدید آتشیں اسلحہ کی ایجاد اور خصوصیت سے ٹینک کی ایجاد نے رسالے کو ختم کر دیا۔ اب صرف سربراہ مملکت کے جلو میں گھڑ سوار ہوتے ہیں۔ پہلی جنگ عظیم تک رسالے سے خوب کام لیا گیا مگر دوسری جنگ عظیم میں اس کی ضرورت نہ رہی۔ زمانہ قدیم سے میں سب سے پہلے مصر میں گھڑ سوار فوج ہوتی تھی۔ اشوریوں ،بابلیوں، ایرانیوں، رومنوں کے پاس بھی بڑے بڑے رسالے ہوتے تھے۔ اور اس میں عام طور پر اچھے گھرانے کے لوگوں کو لیا جاتا تھا۔ جب ہن مشرق سے چل کر مغرب پر حملہ آور ہوئے تو مغرب والے اس طریق جنگ سے ناواقف تھے۔ رسالہ فوج عام طور پر دشمن کا تعاقب اور اپنی فوج کی رہنمائی کے کام سر انجام دیتی تھی۔ انیسویں صدی تک رسالے کو فوج میں خاص اہمیت حاصل تھی۔

نگار خانہ[ترمیم]