رولر کوسٹر

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search
ملبورن، آسٹریلیا میں دنیا قدیم ترین رولر کوسٹر

رولر کوسٹر (انگریزی: Roller coaster) تفریحی سفر کی ایک قسم ہے جو تیز ریل روڈ ٹریک کی ایک قسم کو طے کرتا ہے جس میں سخت موڑ ، کھڑی ڈھلوان اور بعض اوقات الٹا پھیر ہوتا ہے۔ لوگ کھلی گاڑیوں میں پٹری کے ساتھ سواری کرتے ہیں ، اور سواری اکثر دنیا کے تفریحی پارکوں اور تھیم پارکس میں پائی جاتی ہے۔ لامارکس ایڈنا تھامسن نے 1885 میں رولر کوسٹر ڈیزائن کے لئے پہلا مشہور پیٹنٹ حاصل کیا ، اس سلسلے میں سوئچ بیک ریلوے سے متعلق تھا جو ایک سال قبل کونی جزیرے میں کھولا گیا تھا۔ کوسٹر ڈیزائن میں ٹریک کا لازمی طور پر مکمل سرکٹ ہونا ضروری نہیں ہے ، کیونکہ شٹل رولر کوسٹر مظاہرہ کرتے ہیں۔ زیادہ تر رولر کوسٹروں کے پاس متعدد کاریں ہوتی ہیں جس میں مسافر بیٹھ جاتے ہیں اور انہیں روکا جاتا ہے۔ ایک ساتھ لگے دو یا زیادہ کاروں کو ٹرین کہا جاتا ہے۔ کچھ رولر کوسٹرز ، خاص طور پر جنگلی ماؤس رولر کوسٹر ، کاروں کے ساتھ چلتے ہیں۔ [1]


مشابہ عمارتیں[ترمیم]

چین کا ایک رولر کوسٹر جیسا پل صوبہ شنسی میں تعمیر ہوا۔ میں ٹریفک کے لیے کھولا جانے والا یہ منصوبہ اپنی مثال آپ ہے جو کہ 3 منزلوں پر پھیلا فلائی اوور برج ہے۔ 2019ء میں کھلنے والے اس پل کو اس طرح ڈیزائن کیا گیا ہے کہ اوپر چڑھے یا نیچے اترے گاڑیوں کی رفتار خودکار طور پر کم ہوجائے مگر رولر کوسٹر ڈیزائن ڈرائیونگ کے امتحان سے کم نہیں۔ یہ پل 350 میٹر بلند ہے جبکہ مجموعی طور پر یہ اس پہاڑی پر 30 کلومیٹر رقبے (پل کے ساتھ منسلک کو سڑک کو ملا کر) پر پھیلا ہوا ہے۔ اور اپنے منفرد طرز تعمیر کی وجہ سے یہ دنیا بھر میں لوگوں کی توجہ کا مرکز بنا اور سوشل میڈیا پر اس کی تصاویر بھی وائرل ہوئیں۔[2]

کووڈ 19 کا اثر[ترمیم]

منہ کے ذریعے نکلنے والے ذرات سے وائرس کے پھیلاؤ کے پیش نظر جاپان کے ایک پارک نے رولر کوسٹر پر بغیر چیخے بیٹھنے کے لیے ویڈیو جاری کی ہے اور اس طرح چیخوں پر روک لگانے کی کوشش کی ہے۔ [3]

مزید دیکھیے[ترمیم]

حوالہ جات[ترمیم]