ریگولیٹنگ ایکٹ، 1773ء

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search


ہندوستان پر ایسٹ انڈیا کمپنی کی عملداری کے زمانہ میں برطانوی پارلیمان نے یہ ایکٹ منظور کرکے کمپنی کے نظام حکومت میں مندرجہ ذیل اصلاحات کیں۔

  1. بنگال کے گورنر کو ہر سہ صوبجات پر گورنر جنرل مقرر کرکے مدراس اور بمبئی کے صوبے بھی اس کے ماتحت کر دیے۔
  2. گورنر جنرل کو مشورہ دینے کے لیے چار ارکان کی ایک کمیٹی بنائی گئی جس میں کثرت رائے سے فیصلے ہوتے تھے اور گورنر جنرل کو کاسٹنگ ووٹ دینے کا حق حاصل تھا
  3. کلکتے میں ایک عدالت قائم کی گئی جو براہ راست شاہ برطانیہ کی ماتحت تھی۔
  4. کمپنی کے لیے یہ لازم قرار دیا گیا کہ ہر سال اپنی سالانہ کار گزاری کی رپورٹ برطانوی پارلیمان کے سامنے پیش کرے۔

اس ایکٹ کو ہندوستان میں برطانوی حکومت کا سنگ بنیاد کہا جاتا ہے۔