زیریں بلاؤز

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search
زیریں بلاؤز کی منظرکشی

زیریں بلاؤز ایک قسم کی جنسی لذت اندوزی یا غیر مجاز شہوت بینی ہے جس میں ایک عورت کے پستانوں کو بہ نظر غائر دیکھا جاتا ہے جب وہ ان کے کپڑوں ارر خاص طور پر بلاؤز پر سے نظریں پھیرتے ہیں۔[1] اس معاملے میں ممکن ہے کہ کسی قسم کی غیر مجاز تصاویر کا لیا جانا شامل ہو سکتا ہے جو بہ طور خاص عورتوں کے لباس کے اوپری حصے پر مرکوز ہو، بلاؤز ہی پر تمام توجہ دے یا اسی طرح کا کوئی لباس (مثلًا شبانہ لباس)، جس کا مقصد پستانوں کی ساخت کی تفریحی عکاسی ہو سکتا ہے۔

اس طرز عمل کو جنسی لذت اندوزی یا غیر مجاز شہوت بینی کی شکل سمجھا جاتا ہے اور یہ بالائی لہنگا کے مشابہ ہے۔ ڈیجیٹل تصویر کشی کی آمد کے بعد اور کیمرا فونوں کی موجودگی کے دور میں تو تو پستانوں کی ساخت کی خفیہ تصویر کشی کچھ ویب سائٹوں پر بے حد مقبول ہو چکی ہے جو اس طرح کی تصاویر ہی کے لیے شہرت رکھتے ہیں۔[2][3] کئی امریکی اور آسٹریلیائی ریاستیں ایسے مخصوص قوانین رکھتی ہیں جو اس طرح کی تصویر کشی کی ممانعت کرتے ہیں۔[4]

زیریں بلاؤز کی تصویر کشی سے جڑے اخلاقی پہلو بالائی لہنگا کی تصویر کشی سے بھی تعلق رکھتے ہیں۔

مزید دیکھیے[ترمیم]

حوالہ جات[ترمیم]

  1. Tom Dalzell and Terry Victor, Sex Slang, page 51, Routledge, 2007, آئی ایس بی این 9781134194926
  2. Lisa Guerin, Smart Policies for Workplace Technologies, page 215, Nolo, 2013, آئی ایس بی این 9781413318432
  3. Anil Aggrawal, Forensic and Medico-legal Aspects of Sexual Crimes and Unusual Sexual Practices, page 134, CRC Press, 2008, آئی ایس بی این 9781420043099
  4. Lance E Rothenberg, "Re-thinking privacy", American University Law Review, Washington College of Law

مزید پڑھیے[ترمیم]

بیرونی روابط[ترمیم]

  • "Gender and Electronic Privacy". Electronic Privacy Resource Center. 25 دسمبر 2018 میں اصل سے آرکائیو شدہ. اخذ شدہ بتاریخ 23 مارچ 2018. 
  • "Privacy issues plague picture phones". The Honolulu Advertiser. 25 دسمبر 2018 میں اصل سے آرکائیو شدہ. اخذ شدہ بتاریخ 23 مارچ 2018. 
  • "Unauthorized photos". Caslon Analytics. 
  • "Surveillance Society: The Experts Speak". Business Week Online. 26 مئی 2011 میں اصل سے آرکائیو شدہ.