سیرت حلبیہ

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search

سیرت حلبیہعلی بن برہان الدین حلبی کی سیرت النبی پر نہایت مفصل اور مستند تصنیف ہے۔

نام[ترمیم]

اس کا پورا نام انسان العيون فی سيرة الامين المأمون جو اردو میں سیرت حلبیہ اور ام السیر کے نام سے معروف ہے۔ سیرت کے بنیادی ماخذ کی حیثیت رکھتی ہے۔

خصوصیت[ترمیم]

سیرت حلبیہ اپنی خصوصیت کے لحاظ سے ایک ایسی منفرد کتا ب ہے جو تاریخ اسلامی اور سیرت رسول کے موضوع پر ایک مستقل اور اہم مقام رکھتی ہے یہ عربی میں لکھی گئی جس کا ترجمہ تقریباً ہر زبان میں ملتا ہے۔

تلخیص[ترمیم]

علامہ حلبی نے اسے دو مفصل کتابوں کی تلخیص کے طور پر تحریر کیا ایک(عيون الأثر) جوابن سيد الناس، کی کتاب ہے اور دوسری (سيرة الشمس الشامی) جومحمد بن يوسف الدمشقی الصالحی کی کتاب ہے اس میں ابيات شامل کیے جو قصيدة الہمزیہ امام بوصيری سے ہیں ان کتابوں کے علاوہ 300 سے زیادہ کتابوں کی مدد سے یہ سیرت مکمل کی، اردومیں 6 جلدوں میں طبع ہو چکی ہے[1]

حوالہ جات[ترمیم]

  1. سیرت حلبیہ،دارالاشاعت کراچی