ڈوپلے

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search
ڈوپلے
(فرانسیسی میں: Joseph François Dupleix ویکی ڈیٹا پر مقامی زبان میں نام (P1559) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
Dupleix.jpg 

معلومات شخصیت
پیدائش 1 جنوری 1697[1][2][3]  ویکی ڈیٹا پر تاریخ پیدائش (P569) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
لانڈریکیس  ویکی ڈیٹا پر مقام پیدائش (P19) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
وفات 10 نومبر 1763 (66 سال)[4][5]  ویکی ڈیٹا پر تاریخ وفات (P570) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
پیرس  ویکی ڈیٹا پر مقام وفات (P20) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
شہریت Flag of France.svg فرانس  ویکی ڈیٹا پر شہریت (P27) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
عملی زندگی
پیشہ فوجی افسر  ویکی ڈیٹا پر پیشہ (P106) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
پیشہ ورانہ زبان فرانسیسی[6]  ویکی ڈیٹا پر زبانیں (P1412) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
ملازمت فرانسیسی ایسٹ انڈیا کمپنی  ویکی ڈیٹا پر نوکری (P108) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
عسکری خدمات
اعزازات

جوزف فرانسو ڈوپلے (انگریزی: Joseph François Dupleix) (پیدائش: یکم جنوری 1697ء - وفات: 10 نومبر 1763ء) فرانسیسی نو آبادیاتی منتظم اور 1741ء سے 1751ء تک پانڈیچری اور ہندوستان میں فرانسیسی مقبوضات کا گورنر جنرل رہا۔ وہ ہندوستان میں برطانوی گورنر جنرل رابرٹ کلائیو کا مقابل اور سخت حریف تھا۔

حالات زندگی[ترمیم]

جوزف فرانسو ڈوپلے ہکم جنوری 1697ء کو لانڈریکیس، فرانس میں پیدا ہوئے۔ وہ 1741ء سے 1751ء تک پانڈیچری اور ہندوستان میں فرانسیسی مقبوضہ علاقوں کا گورنر جنرل رہا۔ ڈوپلے نے تقریباً وہی پالیسی اور ترکیبیں اختیار کیں جو انگریزوں کی طرف سے رابرٹ کلائیو اختیار کر رہا تھا۔ اس کا بھی مطع نظر یہ تھا کہ ہندوستانی راجوں کی مدد سے انگریزوں کی تجارت کو ختم کیا جائے۔ اس کے لیے رشوت اور دھوکا دہی سب کچھ جائز تھی۔ ہندوستانی ریاستوں کی حالت اس قدر ابتر تھی کہ اپنی بقا کے لیے وہ انگریزوں یا فرانسیسیوں کی مدد کے خواہاں تھے اور ان کی مدد سے اپنے دشمن کے خلاف جنگ کی اور دوسری جانب ان کی حفاظت کے بہانے ان کے علاقے اور دولت ہتھیاتے رہے۔ شطرنج کے اس کھیل میں پہلے فرانسیسیوں نے اور پھر انگریزوں نے نظام حیدرآباد اور دوسرے حکمرانوں کو خوب استعمال کیا۔ سات سال تک انگریزوں اور فرانسیسیوں میں جنگ جاری رہی۔ شروع میں کرناٹک کا بلکہ جنوبی ہندوستان کا تقریباً سارا علاقہ فرانسیسیوں کے قبضہ میں آ گیا تھا۔ لیکن چونکہ انگریزوں کے یہاں نظم و ضبط کچھ زیادہ تھا اور انہیں انگلستان سے بحری افواج کی بھی کافی مدد مل رہی تھی، اس لیے آخر میں تقریباً پورا علاوہ ڈوپلے کے ہاتھ سے نکل گیا اور اسے 1754ء میں فرانس واپس بلا لیا گیا۔ اسی کے ساتھ ہندوستان میں ا پنی سلطنت قائم کرنے کی فرانس کی تمام امیدیں یکسر ختم ہوگئیں۔ ڈوپلے کے آخری دن سخت افلاس اور کس مپرسی میں گزرے، بالآخر 10 نومبر 1763ء کو پیرس، فرانس میں وفات پا گئے۔[7][8]

مزید دیکھیے[ترمیم]

حوالہ جات[ترمیم]

  1. http://data.bnf.fr/ark:/12148/cb11943415j — اخذ شدہ بتاریخ: 10 اکتوبر 2015 — اجازت نامہ: آزاد اجازت نامہ
  2. ایس این اے سی آرک آئی ڈی: https://snaccooperative.org/ark:/99166/w6254hd8 — بنام: Joseph François Dupleix — اخذ شدہ بتاریخ: 9 اکتوبر 2017
  3. Brockhaus Enzyklopädie online ID: https://brockhaus.de/ecs/enzy/article/dupleix-joseph-francois — بنام: Joseph-François Dupleix — اخذ شدہ بتاریخ: 9 اکتوبر 2017
  4. دائرۃ المعارف یونیورسل آن لائن آئی ڈی: https://www.universalis.fr/encyclopedie/joseph-francois-dupleix/ — بنام: DUPLEIX JOSEPH FRANÇOIS — اخذ شدہ بتاریخ: 9 اکتوبر 2017 — ناشر: Encyclopædia Britannica Inc.
  5. Store norske leksikon ID: https://snl.no/Joseph_François_Dupleix — بنام: Joseph François Dupleix — عنوان : Store norske leksikon
  6. http://data.bnf.fr/ark:/12148/cb11943415j — اخذ شدہ بتاریخ: 10 اکتوبر 2015 — اجازت نامہ: آزاد اجازت نامہ
  7. جامع اردو انسائکلوپیڈیا (جلد 2، تاریخ)، قومی کونسل برائے فروغ اردو زبان نئی دہلی، 2000ء، ص 191
  8. جوزف فرانسو ڈوپلے، دائرۃالمعارف برطانیکا آن لائن