ایپوکریفا

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
یہاں جائیں: رہنمائی، تلاش کریں

ایپوکریفا یا اسفارِ مُحِرّفَہ (انگریزی: Apocrypha، یونانی:ἀπόκρυφος) ان مذہبی متون کو کہا جاتا ہے، جو مستند حوالہ نہیں رکھتے، اور بنیادی مذہبی کتاب کا درجہ اس وجہ سے حاصل نہیں کر پاتے۔

اشتقاق[ترمیم]

اس لفظ کی اصل قرون وسطی کی لاطینی زبان کا ایک اسم صفت اپوکریفس (apocryphus) ہے، جس کے معنی خفیہ، چھپی ہوئی چیز یا غیر مستند، غیر مصدقہ کے ہیں۔ یونانی زبان کے اسم صفت اپوکریفس (ἀπόκρυφος) یعنی گمنام، چھپی ہوئی یا غیر واضح سے فعل اپوکریپتیں (ἀποκρύπτειν) بنا ہے جس کے معنی دور چھپانا کے ہیں۔[1]

استعمال[ترمیم]

اس لفظ کا عام طور پر استعمال مسیحی مذہبی تناظر میں ان کتب کے لیے کرتے ہیں، جن کو پروٹسٹنٹ نسخہ بائبل میں شامل نہیں کرتے۔ اور ان کتب کے لیے بھی جنہیں بعض دیگر مسیحی اور یہودی فرقے الہامی مانتے ہیں۔ یہ وہ کتب ہیں جن پر شروع میں ہی اختلاف پایا جاتا تھا کہ یہ الہامی ہیں یا نہیں، بعد میں جب عہد نامہ کی کتب فہرست مسلمہ پیش کی گئی تو۔ تو اس میں کچھ کتب کو اپا کرفا قرار دے کر قبول نہیں کیا گيا۔ تاہم رومی کلیسیا نے 1563ء میں کونسل آف ٹرینٹ کے فیصلے سے انہیں بائبل میں شامل کر لیا۔ مگر پروٹسٹنٹ نے اسے قبول نا کیا۔ لیکن کیتھولک کلیسا ان سے عقاہد کو ثبوت کے لیے سند نہیں بناتے۔[2]

مزید دیکھیے[ترمیم]

حوالہ جات[ترمیم]

  1. Apocrypha - Definition and More from the Free Merriam-Webster Dictionary
  2. قاموس الکتاب، ایف ایس، خیراللہ (مسیحی)، پاکستان بائبل سوسائٹی، لاہور۔ صفحہ 18