خود کا ایک کمرہ

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search
پہلے ایڈیشن کا سرورق جسے ونیسا بیل نے تیار کیا

خود کا ایک کمرہ (انگریزی: A Room of One's Own) ورجینیا وولف کا ایک توسیعی انشائیہ ہے۔ اس کی اشاعت پہلی بار 24 اکتوبر 1929ء کو ہوئی تھی،[1] یہ انشائیہ ان لیکچروں پر مشتمل ہے جو وہ نیونہیم کالج اور گرٹن کالج پر دیے تھے، کیمبرج یونیورسٹی کے دو خواتین کالج میں اکتوبر 1928ء کو دیے تھے۔ حالانکہ یہ توسیعی انشائیہ ایک تصوری راوی اور بیان پر مبنی ہے جو عورتوں کو فکشن میں لکھاریوں اور کرداروں کے طور پر جانچتے ہیں، ان لیکچروں کی ادائیگی کا مسودہ جس کا عنوان "Women and Fiction" (خواتین اور فکشن) ہے جو فورم میں مارج 1929ء چھپا تھا۔[2] اس وجہ سے یہ لیکچروں کو غیر فکشن سمجھا جاتا ہے۔[3] اس انشائیے کو عمومًا نسائیت پسند متن کے طور پر دیکھا جاتا ہے اور اس کا خاص ذکر ادبی اور مقابلی معاملوں میں قلم کاروں کی روایتوں کے بیچ کیا جاتا ہے جو عام طور سے مردوں کی اکٹریت رکھتے ہیں۔

تاریخ[ترمیم]

یہ انشائیہ وولف کے ان لیکچروں پر مشتمل ہے جو نیونہیم کالج اور گرٹن کالج، کیمبرج یونیورسٹی کے دو خواتین کے کالجوں میں اکتوبر 1928 میں دیے گئے تھے۔ وہ نیونہیم میں پیرنیل اسٹراچے کی دعوت پر آتی ہیں جس کے ارکان خاندان بلومسبری گروپ کے کلیدی شرکا، تھے اور وہ نیونہیم کے پرنسپل بھی تھے۔[4]

حوالہ جات[ترمیم]

  1. "FAQ: A Room of One's Own Publication History"۔ Virginia Woolf Seminar۔ University of Alabama in Huntsville۔ 20 جنوری 1998ء۔ صفحہ 1۔ وثق شدہ اصل جمع شدہ24 دسمبر 2012ء کو۔ اخذ کردہ بتاریخ 24 دسمبر 2012۔ 
  2. Orlando, Cambridge.org
  3. Catherine Lavender۔ "Virginia Woolf, A Room of One's Own (1929)"۔ اصل سے جمع شدہ 29 جولائی 2013ء کو۔ اخذ کردہ بتاریخ 21 جولائی 2013ء۔ 
  4. Rita McWilliams Tullberg, ‘Strachey, (Joan) Pernel (1876–1951)’، Oxford Dictionary of National Biography, Oxford University Press, 2004 ماخوذ 6 مارچ 2017

بیرونی روابط[ترمیم]