خیال (دماغ)

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search

کسی آدمی کو خیال اس وقت آتا ہے جب وہ سوچنے کی صلاحیت رکھنے والا ایک شخص اپنے مستقبل یا موجودہ حالات کے بارے میں فیصلے کرتا ہے، تو وہ سب سے پہلے وہ ممکنہ نقصانات یا خطرات کا جائزہ لیتا ہے۔ ایک بار جب ممکنہ خطرات کی شناخت ہو جاتی ہے تو وہ اپنے ماحول اور رفاقتوں کے اثرات کو مدِنظر رکھتے ہوئے ان سے بچنے کی کوشش کرتا ہے۔ یوں وہ اچھے نتائج اور ممکنہ الہٰی برکات پر مبنی روش کا انتخاب کر سکتا ہے۔[1]

حوالہ جات[ترمیم]

مزید دیکھیے[ترمیم]