سدھا بھردواج

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
سدھا بھردواج
Sudha 002.jpg
 

معلومات شخصیت
عملی زندگی
مادر علمی انڈین انسٹیٹیوٹ آف ٹیکنالوجی، کانپور  ویکی ڈیٹا پر (P69) کی خاصیت میں تبدیلی کریں
پیشہ فعالیت پسند،  سیاست دان  ویکی ڈیٹا پر (P106) کی خاصیت میں تبدیلی کریں

سدھا بھردواج ایک ٹریڈ یونینسٹ، کارکن اور وکیل ہیں جو چھتیس گڑھ میں تین دہائیوں سے رہ کر خدمت خلق میں مصروف ہیں۔ وہ چھتیس گڑھ مکتی مورچہ (مزدور کاریاکرتا کمیٹی) کی سرگرم رکن ہیں۔ [1] 28 اگست 2018 کو، دیگر وکلا، مصنفین اور کارکنوں کے ساتھ، سدھا کو بھیما کوریگاؤں کیس میں گرفتارکرلیا گیا ہے [2][3][4][5][6] اور یواےپی اے قانون کے تحت جیل میں ڈال دیا گیا۔

ابتدائی زندگی[ترمیم]

سرگرمی اور قانونی کام[ترمیم]

مہیلا مکتی مورچہ کی خواتین کے ساتھ سدھا

ٹریڈ یونینسٹ سے لوگوں کے لیے وکیل تک کا سفر[ترمیم]

Sudha 002.jpg

چھتیس گڑھ میں انسانی حقوق اور وسیع تر عوامی تحریک[ترمیم]

گرفتاری[ترمیم]

پونے پولیس اور ابتدائی گرفتاریاں[ترمیم]

ثبوت کی نوعیت[ترمیم]

این آئی اے کے ذریعہ مقدمے کی سماعت اور مزید تحقیقات[ترمیم]

کود 19 اور مسلسل قید[ترمیم]

حوالہ جات[ترمیم]

  1. "CMM (Mazdoor Karyakarta Committee) – a political engagement of Sudha Bharadwaj". 
  2. "Why Modi and Shah Took the Bhima Koregaon Investigation Away From Maharashtra". 
  3. "Bhima Koregaon Files: The Story Of Nine Activists Being Punished Without Trial". 13 اکتوبر 2020 میں اصل سے آرکائیو شدہ. 
  4. "Anand Teltumbde: How the police can fabricate evidence to suggest that anyone is an 'urban Maoist'". 
  5. "Two years of Bhima Koregaon Arrests by Nihalsing B Rathod". 
  6. "Who Is Vernon Gonsalves, the Activist Held for 'Naxalite' Links".