مئی 2014 آسام تشدد

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search
مئی 2014 آسام تشدد
بسلسلہ Insurgency in Northeast India
مقام آسام, بھارت
تاریخ 1 مئی 2014ء (2014ء-05-01) – 3 مئی 2014 (2014-05-03)
ہلاکتیں 33 and 3 suspects[1][2]
مشتبہ مرتکبین National Democratic Front of Bodoland (Songbijit faction)[3]
مقصد Not voting for Bodos[4]

مئی 2014 میں بھارت کے آسام میں اسوقت بنگالی زبان بولنے والے مسلمانوں کے خلاف بودو غیر مسلم قبیلے کی جانب سے پرتشدد حملے ہوئے جس کی وجہ مسلمانوں کی جانب سے انکی ایک سیاسی جماعت کو ووٹ نا دینا تھا۔ اس قصے میں 40 سے زائد لوگو کی ہلاکت ہوئی جس میں اکثریت مسلمانوں کی تھی۔

حوالہ جات[ترمیم]

  1. نقص حوالہ: ٹیگ <ref>‎ درست نہیں ہے؛ ht نامی حوالہ کے لیے کوئی مواد درج نہیں کیا گیا۔ (مزید معلومات کے لیے معاونت صفحہ دیکھیے)۔
  2. "30 killed in 36 hours by Bodo militants in Assam, curfew imposed"۔ Indian Express۔ 3 مئی 2014۔ مورخہ 26 دسمبر 2018 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 3 مئی 2014۔
  3. "NDFB denies involvement in violence"۔ Business Standard۔ 3 مئی 2014۔ مورخہ 26 دسمبر 2018 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 3 مئی 2014۔
  4. "Rebels kill 23 in Assam for not voting for Bodos"۔ Times of India۔ 3 مئی 2014۔ مورخہ 26 دسمبر 2018 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 3 مئی 2014۔
  5. "Twenty-two Muslims killed in sectarian attacks in Assam"۔ Reuters۔ 2 مئی 2014۔ مورخہ 26 دسمبر 2018 کو اصل سے آرکائیو شدہ۔ اخذ شدہ بتاریخ 6 مئی 2014۔