مہا رشی مہیش یوگی

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
یہاں جائیں: رہنمائی، تلاش کریں
مہا رشی مہیش یوگی
Maharishi Mahesh Yogi
Maharishi Huntsville Jan 1978A.JPG
مہا رشی مہیش یوگی، 1978
مذہب ہندومت
بانی بہ Transcendental Meditation movement
Global Country of World Peace
فلسفہ Transcendental Meditation
ذاتی تفصیل
قومیت بھارتی
پیدائش مہیش پرساد ورما
12 جنوری 1918
جبل پور، ہندوستان (اب مدھیہ پردیش، بھارت)
وفات 5 فروری 2008(2008-20-50) (عمر  90 سال)
ولودروپ، لمبرخ، نیدرلینڈز
گرو Brahmananda Saraswati
شاگردان بیٹلز، دی بیچ بوائز, روی شنکر اور دیگر
اعزازات مہا رشی

مغربی دنیا کو’یوگ‘ اور ’دھیان‘ سے متعارف کرانے والے ہند نژاد روحانی گرو۔مہا رشی یوگی کی پیدائش ہندستان کی ریاست مدھیہ پردیش (اب چھتیس گڑھ) میں 12 جنوری 1917ء کو ہوئی تھی اور روحانی دنیا میں قدم رکھنے سے قبل انہوں نے طبی علم حاصل کیا تھا۔

یوگ کی تعلیم[ترمیم]

تعلیم حاصل کرنے کے بعد انیس سو چالیس اور پچاس کے عشرے میں وہ ہمالیہ میں اپنے گرو دیو سے یوگ کی تعلیم حاصل کی اور یوگی بن کر روحانی دنیا کے لیے اپنے آپ کو وقف کردیا۔

یوگ کا پرچار[ترمیم]

رشی نے یوگ اور دھیان کے ذریعہ بہتر صحت اور روحانی تعلیم کے وعدے کے ساتھ یوگ کی دنیا میں قدم رکھا اور ان سے بڑی تعداد میں مشہور شخصیتیں منسلک ہوئیں۔ وہ ایک خاص قسم کے یوگ ’ٹرانسینڈل میڈیٹشن‘ کراتے تھے جو ایک دماغی ورزش ہے جس سے انسان اپنی شعور کی تہوں تک پہنچ سکتا ہے۔

امریکہ میں یوگ[ترمیم]

مہا رشی نے یوگ کی اپنی تکنیک کو 1959 میں امریکہ میں متعارف کرایا تھاکہ لیکن 1968 سے پہلے یہ دنیا میں مقبول نہیں ہوسکا تھا۔ جب ’ہپی تحریک‘ کے دوران بیٹلز ہندوستان آئے تو وہ ان سے متاثر ہوگئے اور اس کے ساتھ ہی گرو بھی پوری دنیا میں مقبول ہوگيے لیکن بعد میں بینڈ نے ان سے ناتا توڑ لیا۔

فلاحی کام[ترمیم]

دنیا کے کئی ممالک میں تعلیم، تجارت اور فلاح و بہبود کے اداروں میں اعصابی تناؤ سے نجات کے لیے لوگ اس یوگ کو اپناتے رہے اور پوری دنیا میں ان کے مریدوں کی تعداد تقریبا پچاس لاکھ ہے۔ مہا رشی نے یوگ کی تعلیم اور عطیات سے ملنے والی رقوم سے نیدر لینڈ سمیت دنیا کے متعدد مقامات پر کئی ’امن محل‘ یعنی میڈیٹیشن سنٹرز کھولے اور کئی یونیورسٹیاں بھی قائم کیں۔