ڈبل شاہ

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
یہاں جائیں: رہنمائی، تلاش کریں

وزیر آباد گجرانوالہ (پاکستان) کے رہائشی سید سبط الحسن شاہ کو ڈبل شاہ کہا جاتا ہے۔ اس نے رقم دوگنی کرنے کا جھانسہ دے کر محض 18 مہینوں میں 70 ارب روپے کمائے۔ شروع میں وہ صرف 15 دنوں میں رقم دوگنی کر کے واپس کر دیا کرتا تھا۔ بعد میں یہ مدت بڑھتے بڑھتے 70 دنوں تک جا پہنچی۔حوالہ درکار؟

سید سبط الحسن شاہ 3 مارچ 1964 کو سیالکوٹ میں پیدا ہوا۔ اس کا تعلق نچلے درمیانے طبقے سے تھا۔ B.Sc اور B.Ed کی ڈگری حاصل کرنے کے بعد وہ 2005 تک گورنمنٹ ہائی اسکول ناظم آباد میں سائنس کا معلم رہا۔ پھر وہ چھٹی لے کر دبئی گیا اور 6 ماہ بعد واپس آ کر اس نے نوکری چھوڑ کر پیسے ڈبل کرنے کا کام شروع کیا۔
6 اپریل 2007 کو، جب اسکا پیسے ڈبل کرنے کا کاروبار عروج پر تھا، لاہور کے ایک اخبار دا نیشن کے عثمان غازی صاحب نے صفحہ اول پر اسکا بھانڈا پھوڑ دیا۔ 13 اپریل 2007 کو پولس نے اسے گرفتار کر لیا۔

7 جنوری 2012 کو احتساب عدالت نے سید سبط الحسن شاہ عرف ڈبل شاہ کو اقبال جرم کے بعد 14 سال قید بامشقت کی سزا سنائی ہے اور 3 ارب روپیہ جرمانہ عائد کیا۔ اس کی تمام جائیداد بھی ضبط کرنے کا حکم ہے۔[1] کہا جاتا ہے کہ 30 اکتوبر 2015 کو وہ جیل میں مر گیا۔

حوالہ جات[ترمیم]