حب بخار

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
Jump to navigation Jump to search

وجہ تسمیہ[ترمیم]

دافع حمیٰ افعال کی بنا پر حب بخار کے نام سے موسوم ہے۔

افعال و خواص اور محل استعمال[ترمیم]

حمیٰ ، ملیریا اور موسمی بخاروں میں مفید ہے۔

جزءِ خاص[ترمیم]

کرنجوہ

دیگر اجزاء مع طریقۂ تیاری[ترمیم]

مغز کرنجوہ ۶۰ گرام فلفل سیاہ ۱۵ گرام دونوں دواؤں کو پیس کر لعاب صمغ عربی میں چنے کے برابر گولیاں بنائیں اور استعمال میں لائیں۔ 

مقدار خوراک[ترمیم]

دو گولی صبح دو پہر شام۔

حبِّ بخاربہنسخۂ دیگر:بچھناک، شنگرف، فلفل سیاہ، سہاگہ ہر ایک ۵ گرام عرق لیموں کاغذی میں خوب پیس کر مونگ کے برابر گولیاں بنائیں اور ایک گولی دِن میں دو بار پانی کے ہمراہ کھائیں۔ [1]

مزید دیکھیے[ترمیم]

حوالہ جات[ترمیم]

[2][3][4][5][6]

  1. کتاب دستور المرکبات صفحہ 91
  2. "دستور المرکبات ( اوّل) - اقبال احمد قاسمی - بزم اردو لائبریریبزم اردو لائبریری". 16 اپریل 2018 میں اصل سے آرکائیو شدہ. اخذ شدہ بتاریخ 30 اکتوبر 2018. 
  3. "دستور المرکبات ( دوّم) - اقبال احمد قاسمی - بزم اردو لائبریریبزم اردو لائبریری". 28 مئی 2018 میں اصل سے آرکائیو شدہ. اخذ شدہ بتاریخ 30 اکتوبر 2018. 
  4. "دستور المرکبات ( سوّم) - اقبال احمد قاسمی - بزم اردو لائبریریبزم اردو لائبریری". 14 جون 2018 میں اصل سے آرکائیو شدہ. اخذ شدہ بتاریخ 30 اکتوبر 2018. 
  5. "دستور المرکبات ( چہارم) - اقبال احمد قاسمی - بزم اردو لائبریریبزم اردو لائبریری". 22 مئی 2018 میں اصل سے آرکائیو شدہ. اخذ شدہ بتاریخ 30 اکتوبر 2018. 
  6. کتاب دستور المرکبات

بیرونی روابط[ترمیم]