شہری حقوق

آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا سے
:چھلانگ بطرف رہنمائی، تلاش

شہری حقوق (civil rights) لغوی معنوں کے اعتبار سے تو کسی بھی شخص کو شہریت رکھنے کی بنیاد پر حاصل ہونے والے حقوق کو کہا جاتا ہے اس کے علاوہ اسی اصطلاح کی تعریف یوں بھی کی جاتی ہے کہ شہری حقوق سے مراد کسی بھی جگہ بسنے والے شہریوں کو حاصل ان حقوق سے ہوتی ہے کہ جن کے ذریعے سے ان کو حکومت یا ریاستی طاقت کی جانب سے کسی بھی حق تلفی ، زیادتی و ظلم سے پناہ حاصل ہوتی ہو، مزید یہ کہ شہری حقوق نا صرف افراد کو حق تلفی و زیادتی سے بچانے سبب ہوتے ہیں بلکہ ان کے وسیلے سے معاشرے کے افراد کو شہری و سیاسی زندگی میں کردار ادا کرنے کی قانونی آزادی اور ایسا کرنے کی اہلیت کے لیۓ درکار اسباب بھی مہیا کیۓ جانا لازم قرار دیۓ جاتے ہیں۔ گو کہ اسی سے ملتے جلتے قانونی حقوقِ بنی آدم کے لیۓ ایک اور محکمہ بنام انسانی حقوق بھی بیان کیا جاتا ہے؛ فی الواقع تمام انسانی حقوق ہی شہری حقوق ہوتے ہیں اور بعض ترقی یافتہ ممالک (مثال کے طور پر جاپان وغیرہ) میں یا تو شہری حقوق کی اصطلاح مستعمل ہی نہیں یا پھر ان کو بنیادی انسانی حقوق کہا جاتا ہے نا کہ شہری حقوق اور اس بات کے برحق ہونے کا اندازہ جاپانی ویکیپیڈیا پر شہری حقوق تلاش کرنے پر لگایا جاسکتا ہے جو کہ وہاں ناپید ہے اور صرف انسانی حقوق کا مقالہ ہی دستیاب ہوتا ہے۔ شہری حقوق کی اصطلاح اپنے پس منظر میں امریکی زیادہ ہے اور اس سے مراد ان حقوق کی لی گئی ہے کہ جو امریکہ میں بسنے والے اقلیت (سیاہ فام) افراد کو مہیا کیۓ گۓ تھے[1]۔

بیان[ترمیم]

جیسا کہ مذکورہ بالا ابتدائیے میں ذکر ہوا کہ شہری حقوق سے مراد وہ قوانین ہوتے ہیں جن کے باعث معاشرے کے افراد کو وہ تمام سہولیات مہیا کرنا لازم قرار پاتا ہے کہ جو ان افراد کو معاشرے کی بہبود اور سیاسی زندگی میں بھرپور اور آزادانہ کردار ادا کرنے کے قابل بنانے کے لیۓ ضروری ہوں۔ اور اس تعریف کے مطابق اس ان حقوق میں زندگی کی تمام بنیادی ذہنی و جسمانی سہولیات شامل ہو جاتی ہیں۔

حوالہ جات[ترمیم]

  1. ^ شہری حقوق پر متعدد زرائع سے تشکیل شدہ ایک صفحہ روۓ خط